دو سال کے لیے ٹیکنو کریٹس کی حکومت بنا دی جائے، الطاف حسین

altafایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے پاکستان میں 2 سال کے لئے ٹیکنوکریٹس کی حکومت بنانے کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔
لندن میں گورنر پنجاب چوہدری سرور سے ون آن ون ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے الطاف حسین نے کہا کہ چوہدری سرور فرشتہ صفت انسان ہیں، پاکستان کو ایسے ہی نیک، ایماندار اور میرٹ پر یقن رکھنے والے شخصیات کی ضرورت ہے اور چور اچکے، لٹیرے، کرپٹ، اقربا پروری کرنے والے اور موروثی سیاست کرنے والے لیڈران کی قطعی ضرورت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ میری رائے ہے اگر چوہدری سرور جیسے اور کچھ لوگ ان کی رہنمائی میں آجائیں اور ملک میں 2 سال کے لئے ٹیکنوکریٹس کی حکومت بنادی جائے جو ملک میں تطہیر کا عمل کرے اور بے رحمانہ احتساب کرے اور اس کے راستے میں جو آئے اس کا تخت اچھال دے، پھر راج کرے گی خلق خدا اور میں ایسا وقت آنے کے لئے پرامید ہوں۔
قائد ایم کیو ایم کا کہنا تھا کہ دھرنوں کو تقریباً چالیس روز ہوگئے ہیں اور فریقین کو چاہئے کہ وہ ایک دوسرے کو فیس سیونگ دیں کیونکہ معاملہ صرف فریقین کا نہیں بلکہ ان لاکھوں لوگوں کا ہے جو کئی روز سے کھلے آسمان تلے دھرنوں کی صورت میں موجود ہیں جن میں خواتین، بچے اور بزرگ بھی شامل ہیں اور اس سے صرف وہ متاثر نہیں ہورہے بلکہ کنٹینرز کی وجہ سے روڈ بلاک ہورہے ہیں اور عوام کو آنے جانے میں مشکلات کا سامنا ہے لہٰذا فریقین کو چاہئے کہ وہ کچھ دو اور کچھ لو کی بنیاد پر معاملے کو حل کریں۔
گورنر پنجاب چوہدری سرور نے کہا کہ قائد ایم کیو ایم سے ملاقات میں دیگر امور کے ساتھ آئی ڈی پیز اور سیلاب زدگان کے حوالے سے تفصیلی بات ہوئی جو ظاہر کرتا ہے کہ اس دکھ کی گھری میں ہم اپنے آئی ڈی پی اور سیلاب سے متاثرہ بھائیوں کے ساتھ ہیں اور ان کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں۔ ا

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *