پاکستان عوامی تحریک کا دھرنا ختم کرنے کا اعلان

tahirپاکستان عوامی تحریک کے سربراہ طاہر القادری نے 66روز بعد دھرنا ختم کرنے کا اعلان کر دیا ہے
طاہر القادری نے کہا ہے کہ انقلاب مارچ کے بعد دھرنے کا پہلا مرحلہ مکمل ہو گیا ہے اب اگلے مرحلے میں ملک کے ہر شہر میں دو دو روز کے لیے دھرنا دیا جائے گا۔حکومت کے خاتمے، قومی حکومت کے قیام اور سانحہ ماڈل ٹاؤن لاہور میں ہلاک ہونے والے افراد کے قاتلوں کے خلاف کارروائی کے لیے اسلام آباد میں دیئے جانے والے دھرنے سے خطاب میں ان کا کہنا تھا کہ اسلام آباد میں دھرنا ختم کر رہے ہیں مگر ملک بھر میں احتجاجی جلسوں کا سلسلہ جاری رہے گا، قومی حکومت کے قیام کے لیے جدوجہد جاری رکھیں گے، پی اے ٹی کا انقلاب کا ایجنڈا قائم رہے گا۔
طاہر القادری نے کہا کہ انقلاب کاسفرختم نہیں ہوا،ابھی جاری ہے، ہم نے اگر اسٹیبلشمنٹ سےایک پیسہ بھی لیاہوتومجھےپھانسی دے دی جائے۔
مستقبل کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ 23اکتوبر کو خیبر پختونخوا کے شہر ایبٹ آباد میں انقلاب دھرنا دیا جائے گا پھر محرم الحرام کے احترام میں وقفہ ہوگا۔طاہر القادری کا کہنا تھا کہ 23نومبر کو بھکر میں انقلاب دھرنا دیا جائے گا جبکہ 5دسمبر کو سرگودھا اور 14دسمبر کو سیالکوٹ میں انقلاب دھرنا لے کر جائیں گے جبکہ 25دسمبر کو مزار قائد کراچی میں انقلاب کا دھرنا دیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ قانون ہاتھ میں لینا ہوتا تو 14 افراد کے جاں بحق ہونے کا بدلہ 14لاشوں سے لیتے، آئین اورقانون کےمطابق شہیدوں کےخون کاقصاص لیں گے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *