سی آئی اے ٹارچر رپورٹ پر امریکی ردعمل رپورٹ سے بھی زیادہ تشویشناک!

white houseامریکی سی آئی اے کے وحشیانہ تشدد سے متعلق رپورٹ کے منظر عام پر آنے کے بعد دنیا بھرکے فہمیدہ حلقوں میں بالخصوص اور امریکہ کے تھنک ٹینکس میں بالعموم اٹھایا جانے والا سب سے اہم سوال یہ ہے کہ اب تک خود امریکی حکومت کا اس رپورٹ پر ردعمل کیا رہا ہے۔
دہشتگردی کے خلاف جنگ کے خالق، جارج ڈبلیو بش نے اس رپورٹ کے خلاف جارہانہ ردعمل کا لائحہ عمل مرتب کر لیا ہے۔ان کو ان کے دور کے نائب صدر ڈک چینی کی بھی اس ضمن میں حمایت حاصل ہے۔چینی اس رپورٹ کو ’’مٹی کا کھلونا یا ایک کمزوراور غیر مستند تفتیش‘‘قرار دے رہے ہیں۔وہ اس رپورٹ کی تفصیلات کو دائیں بازو کے ٹی وی ٹاک شوز کی بہتان تراشیاں یا مبالغہ آرائی قرار دے رہے ہیں۔‘‘
ڈک چینی کی گفتگو کا لب لباب یہ ہے:
’’اس اذیت یا تشدد نے بہت سی زندگیاں بچائی ہیں!اس رپورٹ کی اشاعت مشرق وسطیٰ میں مزید تنازعات کا سبب بنے گی۔ وہاں کے لوگ پہلے ہی ہم سے نفرت کرتے ہیں۔ آپ 9/11کے واقعات کے بعد اور کیا توقع کرتے تھے؟ یہ سب کچھ اسی کے نتیجے میں ہواہے۔‘‘

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *