لاہور:دو چرچوں پر خودکش حملے، 15 افراد جاں بحق

PAKISTAN-UNREST-RELIGION-CHRISTIANSلاہور کے علاقے یوحنا آباد میں دو چرچوں پر خودکش حملے سے15افراد جاں بحق اور 70سے زائد زخمی ہو گئے،مشتعل لوگوں نے دو مشکوک افراد کو تشدد کے بعد آگ لگا کر جلا ڈالا،مظاہرین نے فیروز پور روڈ پر ہنگامہ آرائی کی اور میٹروسروس بند کردی۔لاہور میں فیروزپور روڈ پر واقع یوحنا آباد کے گرجا گھروں میں اتوار کی دعائیہ تقریبات جاری تھیں کہ اچانک دھماکوں سے فضا لرز اٹھی،عینی شاہدین کے مطابق ایک حملہ آور نے چرچ میں داخل ہو کر دعائیہ تقریب میں دھماکا کر دیا،دوسرے نے دوسرے چرچ میں داخلے کی کوشش میں ناکامی پر گیٹ پر دھماکا کیا ، ساتھ ہی فائرنگ بھی کی گئی ، دعائیہ تقریب میں دھماکے سےخواتین اور بچوں سمیت متعدد افراد موقع پر جاں بحق اور درجنوں زخمی ہو گئے،دھماکوں کے بعد چیخ و پکار اور بھگدڑ مچ گئی،ہر طرف خوف و ہراس اور سراسیمگی کے مناظر بندھ گئے، چرچ کے باہر جوتیاں اور دیگر اشیاء بکھری تھیں، آہ و بکا اور احتجاج کرتے لوگ گلیوں بازاروں میں نکل آئے، مشتعل لوگوں نے دو مشکوک افراد کو پکڑ کر شدید تشدد کا نشانہ بنایا،انہیں برہنہ کرنے کے بعد تیل چھڑک کر آگ لگا دی ، موقع پر موجود پولیس بھی انہیں روکنے میں ناکام رہی۔ پولیس ،ریسکیو اور ایمبولینس کی گاڑیاں پہنچ گئیں اور لاشوں اور زخمیوں کو اسپتالوں میں پہنچایا ،مظاہرین نے پولیس کے خلاف شدید نعرے بازی کی،پولیس افسران ہی نہیں وفاقی وزیر کامران مائیکل آئے تو انہیں بھی آگے جانے سے روک دیا، پولیس کی گاڑیوں پر پتھراؤ بھی کیا،بعد میں ڈنڈا بردار مظاہرین نعرے لگاتے ہوئے فیروزپور روڈ پر آ گئے اور میٹروسروس بند کر دی، مظاہرین میٹرو بس اسٹیشن میں داخل ہو گئے اور شدید توڑ پھوڑ کی ،پولیس کے مطابق خود کش حملہ آور کے اعضاء قبضے میں لے لیے گئےہیں ، سر اور دیگر اعضاء فرانزک لیبارٹری بھجوا دئیے گئےہیں ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *