منی لانڈرنگ کیس:'زرداری کےعدالت آنے،نہ آنےکا فیصلہ عدالتی کارروائی دیکھ کر ہوگا'

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے مبینہ جعلی بینک اکاؤنٹس سے متعلق از خود نوٹس کیس کے سلسلے میں سابق صدر آصف زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کو آج طلب کر رکھا ہے، تاہم سابق صدر کے وکیل فاروق ایچ نائیک کا کہنا ہے کہ آصف زرداری کے عدالت آنے یا نا آنے کا فیصلہ عدالتی کارروائی دیکھ کر کیا جائے گا۔

دوسری جانب نجی بینک کے سابق صدر حسین لوائی کو سپریم کورٹ پہنچا دیا گیا۔

واضح رہے کہ ایف آئی اے بے نامی اکاؤنٹ سے منی لانڈرنگ کیس میں 32 افراد کے خلاف تحقیقات کر رہی ہے، جن میں آصف علی زرداری اور فریال تالپور بھی شامل ہیں، اسی سلسلے میں گزشتہ دنوں نجی بینک کے سابق صدر حسین لوائی کو گرفتار کیا گیا تھا۔

سابق صدر اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کا نام سپریم کورٹ کی ہدایت پر ایگزیکٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) میں ڈالا جاچکا ہے جس کے بعد دونوں کے بیرون ملک جانے پر پابندی ہے۔

منی لانڈرنگ کیس میں ایف آئی اےکی جانب سے گزشتہ روز دونوں شخصیات کو طلب کیا گیا تھا تاہم وکلاء کے مشورے پر وہ پیش نہیں ہوئے اور قانونی ٹیم کے ذریعے داخل کرائے گئے جواب میں الیکشن کے بعد تک کی مہلت مانگ لی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *