جاپان میں کریڈٹ کارڈ جتنا پتلا سمارٹ فون متعارف کروایا جائے گا

جاپان کی سب سے بڑی ٹیلی کام کمپنی این ٹی ٹی ڈوکومو نے 5.3 ملی میٹر (0.2 انچ) موٹا فور جی فون متعارف کروانے کا اعلان کیا ہے۔

یہ چھوٹا کا فون آئندہ ماہ جاپان میں متعارف کروایا جائے گا اور اس کو اس انداز میں ڈیزائن کیا گیا ہے کہ یہ کریڈٹ کارڈ ہولڈر میں سما جائے گا۔

یہ فون اس نئے رجحان کا حصہ ہے جس میں بڑے سائز کے سمارٹ فون استعمال کرنے والوں کو چھوٹے سائز کے فونز بھی رکھنے کی جانب مائل کیا جا رہا ہے۔

اس فون کا وزن 47 گرام (1.6 اونس) ہے اور اس میں ای بُک جیسی الیکٹرانک پیپر ٹچ سکرین ہے۔

اس کے فنکشن محدود ہوں گے جن میں کال کرنا، ٹیکسٹ پیغام بھیجنا اور انٹرنیٹ کنکشن شامل ہیں تاہم اس میں کیمرہ یا موبائل ایپلی کیشنز استعمال کرنے کی سہولت نہیں ہے۔

اس فون کو ’کارڈ کیٹائی KY-01L‘ کا نام دیا گیا ہے اور اس کی تیاری الیکٹرانکس کمپنی کیوسرا کرے گی۔

فون
اس فون کا وزن 47 گرام ہے اور اس میں ای بُک جیسی الیکٹرانک پیپر ٹچ سکرین ہے

اس ’سادہ، اٹھانے میں آسان‘ کارڈ فون کو این ٹی ٹی ڈوکومو کمپنی بڑی سکرین والے سمارٹ فونز رکھنے والے افراد کے لیے ایک کارآمد اضافی ڈیوائس کے طور پر دیکھ رہی ہے۔

این ٹی ٹی ڈوکومو اس موبائل کو ’دنیا کا پتلا ترین‘ فون قرار دے رہی ہے لیکن فون بنانے والی دیگر کمپنیاں اس دعوے سے اختلاف کر سکتی ہیں۔

فون

اوپو کمپنی کا آر5 فون 4.85 ملی میٹر موٹا تھا جب وہ سنہ 2014 میں متعارف کروایا گیا، اس کے اگلے سال ویوو نے ایکس5 میکس متعارف کروایا جس کی موٹائی 4.75 ملی میٹر تھی۔

اور سنہ 2016 میں موٹورولا نے موٹو زی متعارف کروایا تھا جس کی موٹائی 5.2 سے ذرا سی کم تھی۔

KY-01L کی قیمت 3200 جاپانی ین یعنی 280 ڈالر یا 216 پاؤنڈ ہوگی۔

تحقیقی ادارے سی سی ایس انسائٹ سے منسلک تجزیہ کار بین ووڈ کہتے ہیں کہ ’ایک چھوٹا سا فون کاغذوں میں تو ایک متاثر کن خیال دکھائی دیتا ہے لیکن ڈیوائسز عموماً ایک سمجھوتا ہوتی ہیں اور اس سے بڑھ کر یہ کہ صارفین کو اس کی قیمت ادا کرنا ہوتی ہے اور سمارٹ فونز کے ہوتے ہوئے انھیں اکثر اضافی ایئرٹائم فیس بھی ادا کرنا ہوگی۔‘

حال ہی میں امریکہ میں ایک چھوٹے سائز کا اینڈروئیڈ فون بھی متعارف کروایا گیا ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *