کراچی: نامعلوم افراد کی فائرنگ، سابق رکن اسمبلی علی رضا عابدی جاں بحق

کراچی: ڈیفنس میں نامعلوم مسلح حملہ آوروں کی فارئرنگ سے متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کے سابق رہنما علی رضا عابدی جاں بحق ہو گئے۔

اس حوالے سے بتایا گیا کہ ’ڈیفنس خیابان اتحاد میں موٹرسائیکل پر سوار مسلح افراد نے گھر کے پاس گاڑی میں علی رضا عابدی پر فائرنگ کی‘۔

علاوہ ازیں علی رضا عابدی کو طبی امداد کے لیے پی این ایس شفاء منتقل کردیا گیا تھا تاہم وہ زخموں کی تاب نہ لاسکے اور خالق حقیقی سے جاملے۔‎

دوسری جانب آئی جی سندھ ڈاکٹرسید کلیم امام نے علی رضا عابدی سمیت دو افراد کے زخمی ہونے کے حوالے سے میڈیا رپورٹس پر ڈی آئی جی ساؤتھ سے تفصیلی انکوائری کی ہدایت کردی۔

انہوں نے ابتدائی تفتیش وچھان پین پر مشتمل جملہ ضروری پولیس اقدامات سے متعلق رپورٹ فی الفور طلب کرلی۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے سابق رکن علی رضا عابدی پر حملے کا نوٹس لیتے ہوئے آئی جی سندھ سے رپورٹ طلب کرلی۔

واضح رہے کہ 24 دسمبر کو کراچی کے علاقے رضویہ سوسائٹی میں ’ایک درجن‘ سے زائد نامعلوم افراد نے پاک سرزمین پارٹی (پی ایس پی) کے دفتر پر فائرنگ کرکے 2 کارکن جاں بحق اور 2 زخمی کردیا تھا۔

رضویہ سوسائٹی کے ایس ایچ او نواز بروہی کا کہنا تھا کہ 6 موٹرسائیکلوں پر سوار ایک درجن سے زائد نامعلوم افراد نے پی ایس پی کے دفتر پر فائرنگ کی اور فرار ہو گئے۔

دوسری جانب پی ایس پی کے سربراہ مصطفیٰ کمال نے کارکنوں پر قاتلانہ حملے کو ’متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان اور لندن کا ڈرامہ‘ قرار دیا تھا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *