پاکستان میں طالبان کا دفترکھولنے کے لیے لاہور ہائی کورٹ میں درخواست دائر

Lahore Highcourtپاکستان میں کالعدم تحریک طالبان کا دفتر کھولنے کی اجازت کے لئے ہائی کورٹ میں درخواست دائر کردی گئی ہے۔

لاہور ہائی کورٹ میں دائر درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ نائن الیون کے واقعے کے بعد امریکا کی افغانستان اور عراق میں یلغار اور پاکستان میں دہشت گردوں کے خاتمے کے نام پر کئے جانے والے ڈرون حملوں میں ہزارں افراد مارے گئے اور کھربوں روپے کا نقصان ہوا، ڈرون حملوں کے باعث ملک میں دہشت گردی میں کمی آنے کے بجائے بڑی شدت سے تیزی آئی جس میں بڑی تعداد میں معصوم شہری جاں بحق ہوئے تاہم اب طالبان سے مذاکرات کرکے اس سلسلے کو روکا جانا چاہئے اس لئے انہیں پاکستان میں مذاکرات کے لئے دفتر قائم کرنے کی اجازت دی جائے۔

واضح رہے کہ تحریک انصاف کے چیرمین عمران خان بھی اس سے قبل طالبان سے مذاکرات کے لئے دفتر کھولے جانے کا مطالبہ کرچکے ہیں لیکن ان کے اس مطالبے کی دیگر جماعتوں نے مخالفت کی تھی اور ان کی جماعت کے بھی متعدد رہنما ان کے اس بیان کو ان کا ذاتی بیان قرار دے چکے ہیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *