الفا - بلوکرز کھانے سے معمر افراد فالج کا شکار ہو سکتے ہیں

الفا - بلوکرز کا استعمال بلند فشار خون اور پیش طنابی جیسی بیماریوں میں کیا جاتا ہے لیکن تائیوان یونیورسٹی کے Dr. Chao-Lun Lai نے اپنی جدید تحalpha blockersقیق میں یہ پتہ لگایا ہے کہ الفا- بلوکرز میں مردوں کے بڑے غدود کا علاج بھی موجود ہے۔ یہ تحقیق کینیڈین میڈیکل انسٹیٹیوٹ کے جرنل میں شائع ہوئی ہے۔ اس تحقیق کے مطابق الفا - بلوکرز انسانی نالیاں رواں رکھنے میں مدد دیتے ہیں لیکن جن لوگوں نے پہلے کبھی بلڈ پریشر کی دوائی استعمال نہیں کی اُن کے کیس میں الفا- بلوکرز کھانے کے پہلے 21 دنوں میں فالج کا خطرہ رہتا ہے۔ وجہ یہ ہے کہ الفا- بلوکرز لینے سے بلڈ پریشر میں ایک دم سے کمی آتی ہے جو دماغی فالج کا سبب بن سکتی ہے۔ اسی بات کو ثابت کرنے کے لیے Dr. Chao-Lun Lai اور اُن کے ساتھیوں نے تائیوان کے رہنے والے 7,502 مردوں پر تحقیق کی ۔ نتائج میں یہ بات سامنے آئی کہ الفا - بلوکرز کی مدد سے بڑے غدود کے علاج میں پہلے 21 دن فالج کا بہت خطرہ ہوتا ہے اور اگلے 22 سے ساٹھ دنوں میں خطرے کی شدّت کم ہو جاتی ہے۔دلچسپ بات یہ ہے کہ جو لوگ پہلے سے بلڈ پریشر کی دوائی لے رہے ہیں اُنہیں فالج کا خطرہ نہیں ہوتا۔ لیکن ابھی بھی اس بات میں مزید تحقیقات کی ضرورت ہے کیونکہ تحقیق خالی تائیوان کے رہنے والوں پر کی گئی ہے ، ہو سکتا ہے باقی لوگوں پر اس کے اثرات مختلف ہوں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *