کرکٹ میں سٹے بازی وسیم اکرم نے متعارف کی

wasim akram

اسلام آباد -پاکستان کرکٹ بورڈ کی انکوائری کمیٹی کے سربراہ شکیل شیخ نے وسیم اکرم کی حالیہ پریس کانفرنس کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ سابق فاسٹ باؤلر کو دوسروں کو تنقید کا نشانہ بنانے کے بجائے پہلے اپنے کریئر کو دیکھنا چاہیے جس کے دوران ان پر متعدد الزامات لگائے گئے۔ وسیم اکرم نے ایشیا کپ میں ناقص کارکردگی دکھانے پر بننے والی انکوائری کمیٹی اور شکیل شیخ کا اس کے سربراہ بننے کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ کمیٹی بنانے کا فائدہ کیا ہے، یہ دو دن میں کھلاڑیوں کو کیا بتائے گی، ورلڈ ٹی ٹوئنٹی قریب ہے اور ایسے میں کھلاڑیوں کو اعتماد دینے کے بجائے ہم ان کا مورال گرایا جا رہا ہے۔ خبر رساں ادارے اے پی پی کی رپورٹ میں شکیل شیخ نے کہا 'وسیم کے ماضی سے ہر کوئی واقف ہے، انہیں کسی پر بھی تنقید کرنے سے قبل سوچنا چاہئے کہ ان کا ماضی پرانی فائلوں میں موجود ہے جنہیں بورڈ دوبارہ کھول سکتا ہے' میچ فکسنگ کے حوالے سے جسٹس قیوم کی رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے شکیل شیخ نے کہا کہ پاکستان کرکٹ میں سٹے بازی وسیم اکرم نے متعارف کروائی تھی۔ انہوں نے کہا کہ وسیم انکوائری کمیٹی کے اس لیے مخالف ہیں کیوں کہ انہیں خدشہ ہے کہ اس کی رپورٹ میں ان کے خلاف کچھ سامنے نہ آجائے۔ پاکستان کے لیے سب سے زیادہ ٹیسٹ وکٹیں لینے والے وسیم فوری طور پر جواب دینے کے لیے دستیاب نہیں تھے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ وہ کلب لیول پر کرکٹ کھیل چکے ہیں اور اسے اچھے انداز میں سمجھتے ہیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *