ملک میں کورونا وائرس سے مزید 128 افراد متاثر، 9 انتقال کر گئے

پاکستان میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی صورتحال قدرے بہتر تو ہوگئی ہے لیکن احتیاط نہ برتنے پر اس میں تیزی آنے کا خطرہ بدستور برقرار ہے۔

ملک اب تک 2 لاکھ 96 ہزار 590 افراد میں اس وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس میں سے 6 ہزار 318 مریض انتقال کر گئے جبکہ 2 لاکھ 81 ہزار 459 صحتیاب ہوگئے۔

آج 2 ستمبر کی صبح تک کورونا وائرس سے ہونے والی بیماری کووِڈ 19 کے مزید 128 کیسز سامنے آئے اور 9 مریض انتقال کر گئے،۔

اس کے علاوہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 489 مریض صحتیاب ہونے میں کامیاب رہے جس کے بعد ملک میں فعال کیسز کی تعداد 8 ہزار 813 ہے۔تحریر جاری ہے‎

پاکستان میں کورونا وائرس کے ابتدائی 2 کیسز ایک ہی تاریخ یعنی 26 فروری کو سامنے آئے تھے جس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے فوری طور پر تعلیمی اداروں کو بند کردیا گیا تھا اور بعدازاں دیگر پر ہجوم مقامات کی بندش کے علاوہ لاک ڈاؤن نافذ کر کے ہر قسم کی سرگرمیاں محدود کردی گئی تھی۔

تاہم معاشی چیلنجز کو دیکھتے ہوئے اپریل میں ہی حکومت نے لاک ڈاؤن میں نرمی کرنی شروع کردی تھی اور مئی میں کافی چیزیں کھول دی گئیں تھیں جس کی وجہ سے جون میں پاکستان وبا پر عروج پر جا پہنچی تھی۔

چنانچہ حکومت نے مجموعی لاک ڈاؤن کے بجائے اسمارٹ لاک ڈاؤن اور ٹی ٹی کیو (ٹریسنگ، ٹیسٹنگ اور قرنطینہ) کی پالیسی مؤثر انداز میں اپنائی جس کے واضح طور پر بہتر نتائج سامنے آئے اور اب ملک میں کورونا وائرس کا پھیلاؤ بڑی حد تک سست ہوچکا ہے۔

آج ملک میں وبا کی صورتحال کچھ یوں ہے:

پنجاب

پاکستان میں آبادی کے لحاظ سے سب سے بڑے صوبہ پنجاب میں مزید 89 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی جبکہ 5 مریض انتقال کر گئے۔

ملک میں کورونا وائرس کی صورتحال کے لیے بنائے گئے خصوصی سرکاری پورٹل کے اعداد و شمار کے مطابق پنجاب میں 89 نئے کیسز کے ساتھ مجموعی کیسز کی تعداد 96 ہزار 921 ہوگئی ہے۔

دوسری جانب مزید 5 مریضوں کے انتقال کر جانے سے اموات کی تعداد 2 ہزار 204 تک جا پہنچی ہے۔

اسلام آباد

وفاقی دارالحکومت میں مزید 17 افراد کووِڈ 19میں مبتلا پائے گئے تاہم خوش آئند بات یہ ہے کہ کوئی ہلاکت سامنےنہیں آئی۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق اسلام آباد میں مجموعی کیسز کی تعداد 15 ہزار 666 ہوگئی ہے جبکہ اموات کی تعداد 175 ہے۔

آزاد کشمیر

ملک میں کورونا سے سب سے کم متاثر ہونے والے علاقے میں میں مزید 3 کیسز سامنے آئے۔

کووِڈ 19 کے سرکاری پورٹل کے اعداد و شمار کے مطابق آزاد کشمیر میں مجموعی کیسز کی تعداد 2 ہزار 302 ہوگئی ہے جبکہ اموات کی تعداد 63 ہے۔

گلگت بلتستان

سیاحت کی اجازت دینے کے بعد سے گلگت بلتستان میں نئے کیسز کی تعداد پہلے کی نسبت بڑھی ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 19 افراد میں وائرس کی تصدیق ہوئی۔

حکومت کے اکٹھا کیے گئے اعداد و شمار کےمطابق نئے کیسز کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد 2 ہزار 922 ہوگئی ہے۔

دوسری جانب گلگت بلتستان میں مزید 4 مریضوں کے انتقال کر جانے سے اموات کی تعداد 67 سے بڑھ کر 71 ہوگئی۔

صحتیابی کی شرح

کووِڈ 19 کے نئے کیسز سامنے آنے کے ساتھ صحتیاب مریضوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہورہا ہے۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 489 مریض اس وائرس سے شفایاب ہونے میں کامیاب رہے۔

اس طرح میں ملک میں صحتیاب مریضوں کی مجموعی تعداد 2 لاکھ 81 ہزار 459 ہوگئی جو مجموعی کیسز کا 94 فیصد ہے۔

مجموعی صورتحال

ملک میں عالمی وبا کے کیسز، اموات اور صحتیاب افراد کی تعداد میں اضافے کے بعد اگر مجموعی صورتحال پر نظر ڈالیں تو وہ کچھ اس طرح ہے:

مصدقہ کیسز: 296590

اموات: 6318

صحتیاب: 281459

فعال کیسز: 8813

ملک میں اس وائرس سے سب سے زیادہ متاثر صوبے سندھ اور پنجاب ہیں، صوبہ سندھ میں متاثرین کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 29 ہزار 615 ہے جبکہ پنجاب میں یہ تعداد 96 ہزار 921 تک پہنچ چکی ہے۔

صوبہ خیبرپختونخوا میں کورونا وائرس سے 36 ہزار 265 افراد متاثر ہوچکے ہیں جبکہ صوبہ بلوچستان میں وبا میں مبتلا ہونے والوں کی تعداد 12 ہزار 889 ہے۔

علاوہ ازیں وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں 15 ہزار 666، گلگت بلتستان میں 2 ہزار 922 اور کشمیر میں 2 ہزار 302 افراد عالمی وبا کا شکار ہوچکے ہیں۔

ملک میں اموات کی صورتحال:

سندھ: 2409

پنجاب: 2204

خیبرپختونخوا: 1255

بلوچستان: 141

اسلام آباد: 175

آزاد کشمیر: 63

گلگت بلتستان: 71

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *