حمد تعالیٰ

مجھ بندۂ عاجز کو توفیقِ عبادت دے

یا رب مری آنکھوں کو کچھ اشکِ ندامت دے

باطل کے مقابل میں کمزور نہ پڑ جاؤں

ہمّت دے مجھے یا رب ایمانی حرارت دے

میں زخمی پرندہ ہوں پرواز کا خواہاں ہوں

اب میرے پروں کو تو پرواز کی قوّت دے

اخلاق کی پستی نے پستی میں ڈھکیلا ہے

دے ظرف مجھے اعلیٰ سنجیدہ طبیعت دے

وہ کام لے ہم سب سے جس میں ہو رضا تیری

جو بھٹکے ہوۓ ہیں تو ان کو بھی ہدایت دے

تجھ سے یہ دعا ہر دم کرتا ہے فہیم اختر

تو میرے گلستاں کے ہر پھول کو نکہت دے

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: