شوبز شخصیات کا وزیر اعظم سے گھریلو تشدد سے تحفظ کا بل منظور کروانے کا مطالبہ

شوبز شخصیات نے وزیر اعظم عمران خان سے گھریلو تشدد کو جرم قرار دینے اور خواتین کے تحفظ سے متعلق جلد قانون بنانے کا مطالبہ کردیا۔

اداکارہ ماہرہ خان، عائشہ عمر اور عثمان خالد بٹ سمیت دیگر شخصیات نے وزیر اعظم سے مطالبہ کیا کہ وہ خواتین کو گھریلو تشدد سے بچانے کے لیے فوری طور پر بل منظور کروانے والے میں کردار ادا کریں۔

ماہرہ خان نے وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے حال ہی میں اسلام آباد میں قتل کی جانے والی نور مقدم کے معاملے پر بات کیے جانے کی ویڈیو کو شیئر کرتے ہوئے ان سے سخت قوانین بنانے کا مطالبہ کیا۔

وزیر اعظم مذکورہ ویڈیو میں بتاتے دکھائی دیے کہ وہ خود نور مقدم کیس کی نگرانی کر رہے ہیں اور انہیں اس معاملے کی ہر ایک چیز کا علم ہے۔

ماہرہ خان نے ان کی ویڈیو کو شیئر کرتے ہوئے ٹوئٹ کی کہ وزیر اعظم کو مینشن کیا اور لکھا کہ اب وقت آگیا ہے کہ گھریلو تشدد سے تحفظ کا بل پاس کیا جائے۔

اداکارہ نے مختصر ٹوئٹ میں لکھا کہ جب تک ملک میں قوانین نہیں ہوں گے تب تک وہ ظلم کا نشانہ بنتی رہیں گی، اس لیے تشدد کو روکنے کے لیے بل پاس کروایا جائے۔

انہوں نے لکھا کہ یہ لازمی ہے کہ ہر ظالم کا احتساب ہونا چاہیے۔

ماہرہ خان کی ٹوئٹ کو اداکارہ عائشہ عمر نے بھی ری ٹوئٹ کیا اور انہوں نے بھی گھریلو تشدد کے خاتمے کا بل پاس کروانے کا مطالبہ کیا۔

عائشہ عمر نے بھی وزیر اعظم کو مینشن کرتے ہوئے لکھا کہ اب ان کی ترجیح بل پاس کروانا ہی ہو۔

اداکارہ نے لکھا کہ خواتین باقائدگی سے تشدد کا نشانہ بنتی ہیں اور ایسے عمل کو گھریلو معاملہ قرار دے کر خاموشی اختیار کروائی جاتی ہے۔

انہوں نے گھریلو تشدد کا ہیش ٹیگ استعمال کرتےہوئے لکھا کہ اب وقت آگیا ہے کہ خواتین کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے۔

ساتھ ہی انہوں نے ہاتھ جوڑنے کی ایموجی بھی استعمال کی۔

ان کی طرح اداکارعثمان خالد بٹ نے مذکورہ معاملے پر ٹوئٹ کرتے ہوئے قانون بنانے کا مطالبہ کیا۔

انہوں نے مختصر ٹوئٹ کی کہ بل کو پاس کیا جائے اور ساتھ ہی انہوں نے سوال کیا کہ آخر مذکورہ معاملے کا جائزہ لینے میں اتنی تاخیر کیوں ہو رہی ہے؟

تینوں اداکاروں کے علاوہ دیگر شخصیات نے بھی گھریلو تشدد کے خاتمے کے قوانین بنانے کا مطالبہ کیا جب کہ عام افراد نے بھی اس پر آواز اٹھائی۔

https://twitter.com/xainab_tweets/status/1422520197005594624?ref_src=twsrc%5Etfw%7Ctwcamp%5Etweetembed%7Ctwterm%5E1422520197005594624%7Ctwgr%5E%7Ctwcon%5Es1_&ref_url=https%3A%2F%2Fwww.dawnnews.tv%2Fnews%2F1165540

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *