نوجوانوں کو روزگار کی فراہمی کیلئے 2 خصوصی پروگرامز شروع کیے ہیں، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ حکومت نے ملک کے نوجوانوں کو روزگار کی فراہمی کے لیے 2 خصوصی پروگرامز شروع کیے ہیں جس سے استفادہ کر کے وہ اپنے آپ کو اور ملک کو فائدہ پہنچا سکتے ہیں۔

نوجوانوں کے نام اپنے خصوصی پیغام میں وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ زیادہ تر نوجوانوں کو روزگار نہیں ملتا اور وہ کہتے ہیں کہ سرکاری نوکری پر لگادو لیکن حکومت کتنے لوگوں کو بھرتی کرسکتی ہے جبکہ حکومت کے پاس ویسے ہی اتنے ملازمین بھرتی کردیے گئے ہیں کہ پینش کا بل ہی ملک کو نیچے لے کر جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس اس سے بہتر حل موجود ہے، ساری دنیا میں روزگار نجی شعبے میں ملتا ہے یا لوگ خود اپنے کاروبار شروع کرتے ہیں یعنی درمیانے اور متوسط صنعتیں جنہیں اسٹارٹ اپ کہا جاتا ہے وہ پھر پیسہ بناتے ہیں۔

وزیراعظم نے اعلان کیا کہ حکومت نوجوانوں کے لیے 2 پروگرام لے کر آرہی ہے اس میں سب سے پہلے اسکلز ایجوکیشن ہے جس کے لیے ہم ایک لاکھ 70 ہزار اسکالر شپس دے رہے ہیں اس میں نوجوانوں کو ہنر مند بنایا جائے گا۔

مزید تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اس میں سے 50 ہزار ایسی اسکالر شپس ہیں جو ہائی اینڈ اسکل ہے مثلاً جدید ٹیکنالوجی جس میں آرٹیفیشل انٹیلیجنس وغیرہ۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ وہ چیزیں آرہی ہیں کہ 6، 6 ماہ کے کورسز کے بعد آپ کو وہ نوکریاں ملیں گی کہ آپ سوچ بھی نہیں سکتے کیوں کہ دنیا بہت تیزی سے ٹیکنالوجی کے انقلاب کی جانب جارہی ہے۔

ساتھ ہی ان کا کہنا تھا کہ حکومت نوجوانوں کو دونوں طرح کے ہنر سکھائے گی، ہر کوئی ہائی ٹیکنالوجی کا کورس نہیں کرسکتا لیکن ہم 50 ہزار نوجوانوں کو موقع دیں گے۔

انہوں نے یہ نوجوانوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اگر آپ کے پاس اپنا کاروبار کرنے کے لیے کسی قسم کا آئیڈیا ہے جسے اسٹارٹ اپس کہا جاتا ہے اور آپ کے پاس پیسے نہیں ہیں تو اس کے لیے ہم نے ایک کھرب روپے مختص کیےہیں۔

وزیراعظم نے بتایا کہ اس رقم سے کامیاب نوجوان پروگرام کے تحت نوجوانوں کو قرضے دیے جائیں گے کہ آپ کے پاس اپنے کام، کاروبار کا کوئی بھی آئیڈیا ہو تو آپ کو قرض کے حصول کے لیے میرٹ پر کوالیفائی کرنا پڑے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ 100 ارب روپے کی رقم مختص کی گئی ہے تاکہ نوجوان اپنا کاروبار شروع کرسکیں۔

ساتھ ہی ان کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش یہ ہے کہ ہم ہر سال اس میں اضافہ کرتے رہیں اور زیادہ سے زیادہ نوجوانوں تک پہنچ سکیں اور نوجوان آبادی کو بھی روزگار ملے اور یہ ملک کو بھی اٹھا سکیں۔

وزیراعظم نے امید ظاہر کی کہ نوجوان اسکلز ایجوکیشن اور کامیاب جواب پروگرام سے پوری طرح فائدہ اٹھا کر اپنے ساتھ ساتھ ملک کو بھی فائدہ پہنچائیں گے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published.

error: