واٹس ایپ کا وہ فیچر جس کا صارفین کو عرصے سے انتظار تھا

اگست میں سام سنگ کی جانب سے نئے فولڈ ایبل فونز پیش کیے جانے کے موقع پر واٹس ایپ نے آئی او ایس ڈیوائسز سے چیٹ ہسٹری اینڈرائیڈ فونز میں منتقل کرنے کی سروس متعارف کرانے کا اعلان کیا تھا۔

یہ وہ فیچر ہے جس کا صارفین کی جانب سے عرصے سے مطالبہ کیا جارہا تھا۔

ستمبر 2021 کے آغاز میں یہ فیچر ابتدائی اینڈرائیڈ 10 یا 11 آپریٹنگ سسٹم پر کام کرنے والے سام سنگ فونز کے لیے متعارف کرایا گیا۔

اس کے بعد اکتوبر میں اسے گوگل پکسل فونز اور اینڈرائیڈ 12 پر کام کرنے والی اینڈرائیڈ ڈیوائسز تک توسیع دی گئی۔

مگر اب کمپنی نے اینڈرائیڈ فون سے آئی فون میں چیٹ ہسٹری منتقل کرنے کے فیچر پر کام شروع کردیا ہے۔

واٹس ایپ کی اپ ڈیٹس پر نظر رکھنے والی سائٹ WABetaInfo کے مطابق یہ فیچر آئی او ایس کے لیے واٹس ایپ کے نئے بیٹا ورژن میں دیا گیا ہے۔

اس اپ ڈیٹ سے عندیہ ملتا ہے کہ واٹس ایپ کی جانب سے صارفین کو اینڈرائیڈ سے آئی او ایس ڈیوائسز پر چیٹ ڈیٹا کرنے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔

رپورٹ میں اسکرین شاٹ بھی شیئر کیے گئے جس سے معلوم ہووتا ہے کہ فیچر کس طرح کام کرے گا۔

بظاہر ٹرانسفر سے قبل واٹس ایپ کی جانب سے پرمیشن مانگی جائے گی جس کے بعد کہا جائے گا کہ ایپ کو اوپن اور فون کو اس وقت تک ان لاک رکھیں جب تک چیٹ ٹرانسفر نہیں ہوجاتی۔

اس منتقلی میں اکاؤنٹس انفارمیشن، پروفائل فوٹو، انفرادی چیٹس، گروپ چیٹس، چیٹ ہسٹری، میڈیا (وائس میسجز، تصاویر اور ویڈیوز) اور سیٹنگز سب کچھ ایک سے دوسرے فون میں ٹرانسفر ہوجائے گا۔

مگر کال ہسٹری اور ڈسپلے نیم چیٹ ٹرانسفر کا حصہ نہیں ہوں گے۔

خیال رہے کہ اگست میں اس فیچر کا اعلان کرتے ہوئے کمپنی نے بتایا کہ اس ٹول پر عملدرآمد بہت مشکل تھا کیونکہ تمام میسجز اینڈ ٹو اینڈ انکرپٹڈ اور ڈیوائس میں محفوظ ہوتے ہیں۔

اس ڈیٹا کی منتقلی کے لیے واٹس ایپ، او ایس ڈیولپرز اور فون بنانے والی کمپنیوں کو اضافی کام کی ضرورت تھی۔

آسان الفاظ میں یہ ٹول سب کی مشترکہ کوششوں کا ہی نتیجہ ہے۔

یہ نیا فیچر ملٹی ڈیوائس سپورٹ کے لیے بھی کارآمد ہوگا کیونکہ اس چیٹ مائیگریشن ٹول سے صارفین کو ایک اکاؤنٹ کے تحت کئی ڈیوائسز کو منسلک کرنے کی سہولت مل سکے گی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published.