پاکستان میں کئی ہفتوں بعد یومیہ کیسز کی تعداد 2 ہزار سے کم ہوگئی

پاکستان میں گزشتہ چوبیس گھنٹے کے دوران کورونا وائرس کے کیسز میں نمایاں کمی دیکھی گئی ہےتاہم حکام ایس او پیز پر عملدرآمد کی تاکید جاری رکھے ہوئے ہیں۔

سرکاری سطح پر عالمی وبا کے اعداد و شمار مرتب کرنے والی سرکاری ویب سائٹ کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں ایک ہزار 531 افراد وائرس سے متاثر ہوئے جبکہ مزید 83 افراد انتقال کر گئے۔

ملک میں 14 مئی کو مجموعی طور پر کووڈ-19 کی تشخیص کے لیے 30 ہزار 248 ٹیسٹ کیے گئے جس کے نتیجے میں کورونا کیسز کے مثبت آنے کی شرح 5.06 فیصد رہی اور فعال کیسز کم ہو کر 71 ہزار 804 رہ گئے ہیں۔

پاکستان میں اب تک 8 لاکھ 74 ہزار 751 افراد کے وائرس سے متاثر ہونے کی تصدیق ہوچکی ہے جن میں سے 19 ہزار 467 زندگی کی بازی ہار گئے۔

علاوہ ازیں گزشتہ 24 گھنٹوں میں وائرس کا شکار مزید 3 ہزار 42 افراد صحتیاب ہوئے یوں کورونا سے صحتیاب ہونے والے مریضوں کی مجموعی تعداد 7 لاکھ 83 ہزار 480 تک جاپہنچی ہے۔

واضح رہے کہ پاکستان میں کورونا وائرس کے پہلے کیس کی تصدیق 26 فروری 2020 کو ہوئی تھی، جس کے بعد سے وبا کے پھیلاؤ میں اتار چڑھاؤ جاری ہے اور اب تک وائرس کی 3 لہریں دیکھی جاچکی ہیں۔

موجودہ لہر کے دوران کورونا وائرس کے کیسز اور اموات میں اضافے کے پیشِ نظر عیدالفطر کے موقع پر تفریحی مقامات بشمول پبلک پارکس، پکنک پوائنٹس، سیاحتی مقامات، ساحلِ سمندر وغیرہ بند رکھے گئے ہیں۔

حکام نے عوام پر زور دیا کہ وبا کا پھیلاؤ روکنے کے لیے عید کی تعطیلات کے دوران اپنے گھروں میں رہیں اور محفوظ رہیں۔

پنجاب

صوبہ پنجاب کورونا وائرس کی تیسری لہر سے سب سے زیادہ متاثر ہوا تاہم اب یومیہ کسیز میں مسلسل کمی کا سسلہ جاری ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں وبا کے مزید 483 کیسز کی تصدیق ہوئی جبکہ 40 اموات رپورٹ ہوئیں۔

پنجاب میں مجموعی طو پر کورونا وائرس سے 3 لاکھ 24 ہزار 589 افراد متاثر جبکہ 9 ہزار 322 انتقال کرچکے ہیں۔

سندھ

صوبہ سندھ میں وبا کا پھیلاؤ بڑھ رہا ہے اور یہاں گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کے 714 کیسز کی تصدیق ہوئی جبکہ مزید 13 افراد جان کی بازی ہار گئے۔

مذکورہ اضافے کے بعد سندھ میں کورونا سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 2 لاکھ 97 ہزار 78 جبکہ اموات کی مجموعی تعداد 4 ہزار 793 تک جاپہنچی ہے۔

خیبر پختونخوا

کورونا وائرس کی تیسری لہر نے پنجاب کے بعد خیبرپختونخوا کو زیادہ متاثر کیا تھا لیکن اب یہاں بھی وبا کے پھیلاؤ میں کمی کا رجحان ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں کووڈ-19 کے مزید 211 کیسز اور 20 اموات رپورٹ ہوئیں۔

اب تک خیبر پختونخوا میں مجموعی طور پر ایک لاکھ 26 ہزار 614 افراد وبا سے متاثر جبکہ 3 ہزار 743 لقمہ اجل بن چکے ہیں۔

بلوچستان

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے سب سے وسیع صوبے میں مزید 36 افراد وائرس سے متاثر پائے گئے اور 5 انتقال کر گئے۔

نئے کیسز کے اضافے کے بعد بلوچستان میں عالمی وبا سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 23 ہزار 814 ہوگئی جبکہ اموات کی تعداد 262 تک جا پہنچی ہے۔

اسلام آباد

کورونا کی تیسری لہر نے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کو بھی متاثر کیا ہے جہاں گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کے مزید 58 کیسز سامنے آئے جبکہ 3 مریض انتقال کر گئے۔

اسلام آباد میں کورونا متاثرین کی مجموعی تعداد 79 ہزار 27 ہے جبکہ 727 افراد وبا سے انتقال کرچکے ہیں۔

آزاد کشمیر

آزاد کشمیر میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے مزید 26 کیسز کی تصدیق ہوئی اور 2 مریض دم توڑ گئے۔

مذکورہ اضافے کے بعد آزاد کشمیر میں کورونا وائرس مجموعی طور پر 18 ہزار 212 افراد کو متاثر کرچکا ہے جبکہ 513 افراد کی موت کا سبب بھی بنا ہے۔

گلگت بلتستان

کورونا وائرس سے سب سے کم گلگت بلتستان متاثر ہوا ہے اور وہاں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 3 کیسز سامنے آئے اور 30 اپریل کے بعد سے مزید کوئی موت رپورٹ نہیں ہوئی۔

گلگت بلتستان میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 5 ہزار 417 جبکہ اموات کی مجموعی تعداد 107 ہے۔