کرینہ کپور کے دوسرے بچے کا نام، بہار کا نوجوان جس نے عمران ہاشمی کو ’والد بنا لیا‘ اور فردین خان پھر خبروں میں

اکثر فلمی ستاروں کا فلمی امیج ان کی اصل زندگی سے کتنا مختلف ہوتا ہے، یہ ہم کئی مرتبہ دیکھ اور سن چکے ہیں۔

جیسے زیادہ تر ولن فلموں میں جتنے خونخوار یا کم ظرف نظر آتے ہیں، اصل زندگی میں ان کی شرافت کی مثالیں سننے میں آتی ہیں۔ چاہے ممتاز اداکار پران ہوں یا پھر دبنگ کے سونو سود۔ ایسے ہی ایک اور اداکار ہیں جنھیں ان کے فلمی امیج کے سبب 'سیریئل کِسر' کا نام دے دیا گیا۔

اب ان کا یہ امیج تھا یا پھر ان کے ایک نوجوان مداح کی ان کے لیے محبت، کہ انھوں نے اپنے کالج کے ایڈمٹ کارڈ پر والد کی جگہ عمران ہاشمی کا نام لکھوا دیا۔ جب اس کارڈ کے سکرین شاٹس سوشل میڈیا پر وائرل ہوئے تو یونیورسٹی کا عملہ حیران ہو گیا۔

بہار کے اس بیس سالہ منچلے نوجوان نے کارڈ پر ماں کی جگہ سنی لیونی کا نام لکھوایا تھا۔ جب یہ پوسٹ وائرل ہوئی تو عمران ہاشمی نے اس سے متعلق آرٹیکل کو ری ٹوئٹ کرتے ہوئے جواب میں لکھا ’قسم خدا کی یہ میرا بچہ نہیں ہے۔‘

سوشل میڈیا پر لوگ اس پوسٹ پر طرح، طرح کے کمنٹس کے ساتھ خوب لطف اندوز ہو رہے ہیں۔

کرینہ

کرینہ کپور اور سیف علی خان کے دوسرے بچے کا نام کیا ہوگا، اس بارے میں خود کرینہ کا کہنا ہے کہ انھوں نے ابھی تک کچھ نہیں سوچا۔

وہ یہ فیصلہ ’بچے کی پیدایش کے بعد ہی کریں گے۔‘ لگتا ہے تیمور کی پیدائش کے بعد ان کے نام پر جو تنازع کھڑا ہوا تھا وہ ابھی تک ان کے ذہن میں تازہ ہے۔

ریئلٹی شو ’واٹ ومن وانٹ‘ میں اداکارہ نیہا دھوپیا سے بات کرتے ہوئے کرینہ کا کہنا تھا کہ تیمور کے نام پر جو ہنگامہ ہوا تھا اس کے بعد سیف اور انھوں نے طے کیا کہ ہم نام بچے کی پیدائش کے بعد ہی طے کریں گے۔

اس تمام ہنگامے کے کچھ عرصے بعد سیف علی خان نے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ انھوں نے تیمور کا نام تبدیل کرنے کے بارے میں سوچا تھا لیکن کرینہ اس کے حق میں نہیں تھیں۔ ان کا کہنا تھا کہ لوگ آپ کے نظریے یا رائے کا احترام کرتے ہیں، نام کا نہیں۔

بالی وڈ

یہ بھی حقیقت ہے کہ تیمور کے نام پر ان کے والدین کو جتنا ٹرول کیا گیا تھا، تیمور نے میڈیا اور سوشل میڈیا پر اس سے کہیں زیادہ محبت اور شہرت حاصل کی ہے۔ کسی نے ٹھیک ہی کہا ہے کہ 'نام میں کیا رکھا ہے۔'

فردین خان کافی عرصے بعد ایک بار پھر خبروں میں ہیں اور اس بار بھی ان کی تصاویر سوشل میڈیا پر گردش کر رہی ہیں۔

کچھ عرصہ قبل فردین خان کی کچھ تصاویر پر لوگوں نے انھیں کافی ٹرول کیا تھا جس میں ان کا وزن بڑھا ہوا تھا لیکن اس بار ان کی جو تصاویر منظر عام پر آئی ہیں، اس میں فردین اپنے پہلے روپ میں نظر آئے اور وہ کاسٹنگ ڈائریکٹر مکیش جھابڑہ کے دفتر سے باہر نکل رہے تھے۔

اس کے ساتھ ہی فلموں میں ان کی واپسی کی خبریں پھیلنے لگیں۔ فردین آخری بار 2010 میں فلم دلہا مل گیا میں نظر آئے تھے۔

اس ہفتے رونامہ ٹائمز آف انڈیا سے بات کرتے ہوئے فردین نے کہا کہ وہ کچھ عرصے کے لیے لندن چلے گئے تھے، اپنی فیملی پر توجہ دینا چاہتے تھے لیکن انھیں اندازا نہیں تھا کہ انڈسٹری سے ان کا یہ بریک اتنا طویل ہو جائے گا۔

1998 میں فلم پریم اگن سے اپنے کیریئر کا آغاز کرنے والے فردین نے ’جانشین‘، ’جنگل‘، ’نو اینٹری‘ اور ’ہے بیبی‘ جیسی فلموں میں کام کیا۔

error: