’الکیمسٹ‘ ناول کے برازیلین مصنف نے قرآن پاک کے حوالے سے ایک ایسی بات کہہ دی کہ ساری دنیا حیران و ششدر رہ گئی

al

دنیا بھر میں پہچان رکھنے والے برازیلین مصنف پالو کولہو نے سرعام قرآن کریم کے دفاع کے لیے میدان میں آ گئے ۔ انہوں نے اپنا دفاعی بیان فیس بک پیج پر دیا۔ اس سے قبل انہوں نے فیس بُک پر ایک تصویر پوسٹ کی تھی جس کے جواب میں انہی کے ایک پرستار نے سخت الفاظ میں تبصرہ کیا تھا ۔ دنیا بھر میں شہرت رکھنے والے' الکیمسٹ' ناول کے مصنف نے 8 اگست کو قرآن کی ایک تصویر اپنی فیس بک پر لگائی ۔ تصویر کے عنوان میں انہوں نے لکھا: ایک ایسی کتاب جس نے دنیا بدل کر رکھ دی۔ ان کے بہت سے پرستاروں نے اس پوسٹ پر ان کی حمایت میں تبصرہ کیا۔ اب تک اس تصوری کو 39395 لائیکس اور 4499 شئیر مل چکے ہیں۔ایک پرستار نے اختلاف کرتے ہوئے لکھا:" واقعی؟ یہ کتاب تو تشدد اور قتل و غارت کو فروغ دیتی ہے۔ "اس کمنٹ کے جواب میں کولہو نے خاموشی اختیار کرنے کی بجائے جواب دینا مناسب سمجھا اور اسلام کے دفاع میں جوابی تبصرہ فرماتے ہوئے لکھا: آپ کی بات میں کوئی سچائی نہیں ہے۔ میں ایک عیسائی ہوں۔ ہم نے تلوار کے ذریعے اپنے مذہب کو پھیلانے کی کوشش کی۔ ڈکشنری میں کوزیڈز لفظ کا مطلب دیکھیں۔ ہم نے لاکھوں عورتوں کا قتل کیا۔ انہیں جادو گرنیاں قرار دیا۔ سائنس کو روکنے کی کوشش کی جیسے جیلیلو جیلیلی کے کیس میں آپ دیکھ سکتے ہیں۔ اس لیے ہم کسی مذہب کو الزام نہیں دے سکتے۔ یہ تو لوگوں پر منحصر ہے کہ وہ مذہب کا کیسا استعمال کرتے ہیں۔ مصنف نے تمام پاکستانی پرستاروں کو آزادی مبارک کا پیغام بھی بھیجا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *