بنگلا دیش نے انگلینڈ کے خلاف تاریخی فتح حاصل کرلی

میرپور -بنگلہ دیش نے دوسرے ٹیسٹ میچ میں بانی کرکٹ انگلینڈ کو 108 رنز سے شکست دے کر تاریخی فتح حاصل کر لی ہے اور 2 میچوں کی سیریز 1-1 سے برابر ہو گئی ہے۔ بنگلہ دیش کی ٹیسٹ کرکٹ میں انگلینڈ کے خلاف یہ پہلی فتح ہے جبکہ اس سے قبل وہ صرف زمبابوے اور ویسٹ انڈیز کو ہی ٹیسٹ میچ میں شکست دینے میں کامیاب ہو سکا ہے۔ تفصیلات کے مطابق شیر بنگلہ نیشنل سٹیڈیم میرپور میں ہونے والے سنسنی خیز مقابلے میں بنگلہ دیش نے انگلینڈ کو جیت کیلئے 262 رنز کا ہدف دیا تھا جس کے تعاقب کپتان الیسٹر کک اور بین ڈوکیٹ نے پہلی وکٹ کی شراکت میں 100 رنز پر فتح کی بنیاد تو رکھ دی لیکن مڈل آرڈر بلے باز دھوکہ دے گئے اور آٹھ بلے باز مجموعی سکور میں صرف 68 رنز کا اضافہ ہی کر سکے اور پوری ٹیم 168 رنز پر ہی ڈھیر ہو گئی۔ یوں بنگلہ دیش نے 108 رنز کیساتھ بانی کرکٹ کے خلاف اپنی کرکٹ کی تاریخ میں پہلی فتح حاصل کر کے آج کے دن کو یادگار بنا لیا۔
مہدی حسن مرزا نے پہلی اننگز کی طرح تباہ کن باﺅنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 6 کھلاڑیوں کو ٹھکانے لگایا۔ انگلینڈ کی جانب سے الیسٹر کک نے 59، بین ڈوکیٹ نے 56، جو روٹ نے 1، گیری بیلانس نے 5، معین علی نے 0، بین سٹوکس نے 25، جونی بیرسٹو نے 3 اور کرس ووکس نے 9 رنز بنائے جبکہ عادل راشد، ظفر انصاری اور سٹیفن فن بغیر کھاتہ کھولے ہی پویلین لوٹ گئے۔ بنگلہ دیش کی جانب سے مہدی حسن مرزا نے تباہ کن باﺅلنگ کرتے ہوئے 6 کھلاڑیوں کو ٹھکانے لگا کر ٹیم کی تاریخی فتح کا خواب پورا کیا جبکہ شکیب الحسن نے 4 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی۔

واضح رہے کہ بنگلہ دیش نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کرتے ہوئے پہلی اننگز میں 220 رنز بنائے تھے جس کے جواب میں انگلش ٹیم 244 رنز کر اس کے خلاف 24 رنز کی برتری حاصل کر سکی تھی۔ بنگلہ دیش نے دوسری اننگز میں 296 رنز بنائے اور انگلش ٹیم کو ٹیم کیلئے 262 رنز کا ہدف دیا تھا۔ بنگلہ دیش کی جانب سے مہدی حسن مرزا نے میچ کی دونوں اننگز میں 12 وکٹیں حاصل کیں جبکہ شکیب الحسن نے کل 5 وکٹیں حاصل کیں۔ انگلینڈ کی جانب سے معین علی نے دونوں اننگز میں کل 6 وکٹیں حاصل کیں جبکہ عادل راشد نے 4 وکٹیں حاصل کیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *