افغانستان: سرتاج عزیز کی اشرف غنی اور عبداللہ سے ملاقاتیں، پاکستان آنے کی دعوت

sartajوزیراعظم کے مشیربرائے قومی سلامتی وخارجہ امور سرتاج عزیز نے اتوار کو کابل کاایک روزہ دورہ کیا اور نومنتخب افغان صدر اشرف غنی وچیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ سے ملاقاتیں کرکے انھیں پاکستان کے دورے کی باضابطہ دعوت دی۔
اشرف غنی نے دورے کی دعوت قبول کرتے ہوئے کہاکہ وہ مستقبل قریب میں پاکستان آئیں گے۔ ملاقات کے دوران افغان صدراشرف غنی نے اس بات پرزور دیاکہ یہ تاریخی موقع ہے کہ پاکستان اورافغانستان کے تعلقات کو باہمی مفادپر مبنی پارٹنرشپ میں تبدیل کیا جائے۔ میں چاہوں گاکہ وزیراعظم نوازشریف کے ساتھ دوطرفہ تعلقات کے حوالے سے اپنا وژن شیئر کروں۔ سرتاج عزیز نے اشرف غنی کو افغانستان میں اقتدار کی پرامن منتقلی اور قومی حکومت کے قیام پر مبارکباد دی۔
مشیر خارجہ نے سیاسی، سیکیورٹی اوراقتصادی شعبوںمیں باہمی رابطوں کیلیے دوطرفہ میکنزم کی اہمیت پر بھی زور دیا۔ مشیرخارجہ نے کہاکہ پاکستان افغانستان میں امن واستحکام کی کوششوں کی مکمل حمایت اور تعاون کرے گا۔ افغان چیف ایگزیکٹوعبداللہ عبداللہ نے بھی سرتاج عزیزسے ملاقات میں اس بات پر زور دیاکہ قریبی تعاون پر مبنی تعلقات کے لیے دونوں ممالک کو مشترکہ طور پر کام کرنا ہوگا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *