ملالہ نے اپنا خون آلود اسکول یونیفارم عطیہ کردیا

Malalaامن کا نوبیل انعام حاصل کرنے والی پاکستانی طالبہ ملالہ یوسفزئی نے نوبیل پیس سینٹر کو اپنا وہ اسکول یونیفارم عطیہ کردیا ہے جو انھوں نے خود پر حملے کے وقت پہن رکھا تھا۔
نوبیل پیس سینٹر کی جانب سے جاری کی گئی ایک پریس ریلیز کے مطابق ملالہ کے یونیفارم کورواں برس ناروے کے شہر اوسلو میں پرائز ڈسٹری بیوشن کی تقریب میں نمائش کے لیے پیش کیا جائے گا۔بچیوں کی تعلیم کے لیے جدوجہد کرنے والے 17 سالہ پاکستانی طالبہ ملالہ یوسف زئی نے ہندوستان کے کیلاش ستیارتھی کے ساتھ مشترکہ طورامن کا نوبیل انعام جیتا تھا۔مذکورہ انعام انھیں 10 دسمبر کو اوسلو میں ایک تقریب کے دوران دیا جائے گا۔
یونیفارم کو عطیہ کیے جانے کے حوالے سے ملالہ نے ایک انٹرویو کے دوران کہا کہ میرا یونیفارم میرے لیے بہت اہمیت رکھتا ہے کیوں کہ اسکول جاتے وقت میں اسے پہنتی تھی۔دس دسمبر کو نوبیل پیس پرائزکی تقریب کے بعد 11 دسمبر سے نمائش کو عام عوام کے لیے کھول دیا جائے گا۔
یاد رہے کہ اسکول وین میں سوارملالہ یوسفزئی پراکتوبر 2012 میں وادی سوات میں مینگورہ کے مقام پر کالعدم تحریک طالبان پاکستان نے حملہ کیا تھا تاہم خوش قسمتی سے وہ اس حادثے میں محفوظ رہی تھیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *