کندھوں پر لاشیں

مہر ساجد بلال

sajid bilal

حالیہ کچھ دنوں سے ملکی فضا ایک بار پھردہشت گردی کی وجہ سے سوگوار ہے دہشت گرد پھر سے سرگرم دیکھائی دے رہے ہیں اور ملکی سلامتی کو چیلنج کر رہے ہیں لیکن ان دہشت گردوں کی پشت پناہی کرنے والے یہ کیوں بھول گئے کہ ہم نے لاکھوں قربانیاں پیش کرنے کے بعد اس آزاد ریاست کو حاصل کیا اور ہم نہ جھکے تھے نہ ہی ہم بکے تھے پھر ان کے دل و دماغ کی غلط فیہمیاں کیوں دور نہیں ہوتیں ہماری آنکھوں میں آنسو دیکھ کر یہ سازشی کیوں غلط مطلب نکال لیتے ہیں کہ ہم خفاء ہو گئے ہیں ہم ہمت ہار چکے ہیں لیکن میں یہاں واضح کرتا چلوں کہ ہماری آنکھوں میں آنسو ؤں کا آنا کوئی خوف کی علامت نہیں بلکہ ہمارے اندر کا جذبہ حب الوطنی ہے جو ہمیں چیخ چیخ کر کہتا ہے کہ کاش شہادت کی موت نصیب کرنے والے بھائی کی جگہ میں ہوتا اور یہ شہادت کی موت میرے نصیب میں ہوتی دہشت گردی کو جڑ سے ختم کرنے کا عہد کئیے ہم کامیابیوں کی منزل کو چھونے جا رہے ہیں اور انشاء اللہ ہم دہشت گردوں کو صفا ہستی سے مٹا کر دم لیں گے کندھوں پر لاشوں کو اٹھانے سے ہمارے دل کمزور نہیں ہوتے بلکہ ہم میں ہمت ،جذبہ اور بڑ ھ جاتا ہے دہشت گرد اپنے انجام کو پہنچ رہے ہیں ہماری پاک افواج بے گناہ لوگوں کو نشانہ بنانے والے دہشت گردوں کے خفیہ ٹھکانوں کو تلاش کر کرملیا میٹ کر رہی ہے یہاں میں ایک اور حقیقت سے پردہ اٹھاتا چلوں کہ ہمارا ہمسایہ ملک افغانستان ہماری سلامتی کے لیے چیلنج کی صورت اختیار کررہا ہے اور اس کی پشت پناہی ہمارا ازلی دشمن جس کو ہماری ترقی و خوشحالی دیکھی نہیں جاتی اپنے اوچھے ہتھ کنڈوں سے باز نہیں آتا انڈیا کر رہا ہے اور افغانستان کو تو یاد ہونا چاہئیے کہ دہشت گردی کی جنگ ہم ایک ساتھ لڑتے رہے ہیں اور ان کو شایدیہ بھی یاد نہیں کہ ہم دوست ہی نہیں بلکہ محافظ بھی رہے ہیں جب سویت یونین نے ان کو پیروں تلے روندنے کی کوشش کی تو ہم ہی تھے جنہوں نے افغانستان کی جنگ لڑی اور ان کو آزادی کی نعمت سے محروم ہونے سے بچالیاتھااور اب بھی ہم وہی ہیں جو مسلم علاقے ہی نہیں مسلم افکار،اقدارروایات،تہذیبی ورثے کی حفاظت کی جنگ لڑرہے ہیں اور افغانستان میں موجود دہشت گردوں کی لسٹ افغانستان کو فراہم کر دی گئی ہے اوران کو اپنے ماضی کو سامنے رکھ کر فیصلے کرنے چاہئیں اور پاکستان کے اندرونی معاملات میں دخل اندازی کرنے اور حالات کی خرابی میں دشمن کا ساتھ دینے سے باز رہنا چاہئیے ہماری پوری قوم پر عزم ہے کہ وہ دن دور نہیں جب ہمارا پیارا وطن امن کا گہوارا بنے گا ان دہشت گردوں کے خلاف جنگ میں ہم متحد قوم ہیں اور دہشت گردی کا نام و نشان مٹا کر ہی دم لیں گے پاک افواج نے ہر مشکل وقت میں ملکی حفاظت کے لیے ہر ممکن اقدام کئیے ہیں پوری قوم پاک افواج کے شانہ بشانہ کھڑی ہے کسی قربانی سے بھی دریغ نہیں کریں گے ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *