الیکشن کمیشن کاکسی بھی حلقے میں ضمنی انتخابات ملتوی کرنے سے انکار

 ECPالیکشن کمیشن آف پاکستان نے کسی بھی حلقے میں ضمنی انتخابات ملتوی کرنے سے انکار کردیا ہے۔

پیر کے روز اہم اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سیکریٹری الیکشن کمیشن اشتیاق احمد نے کہا ہے کہ اجلاس نے ضمنی انتخابات کیلئے بیالیس حلقوں میں سیلاب اور امن وامان کی صورتحال کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔

اس موقع پر انہوں نے واضح کیا کہ تمام حلقوں پر شیڈول کے مطابق ضمنی انتخابات ہونگے۔

سیکریٹری الیکشن کمیشن کے مطابق ضمنی انتخابات کے لیے بیالیس حلقوں کے چار ہزار پانچ سوچھبیس پولنگ اسٹیشنوں پرفوج تعینات ہوگی۔

انہوں نے بتایا کہ ان میں سے دو ہزار چھ سو چھیاسی پولنگ اسٹیشنوں پر فوج باہر ہوگی اور ایک ہزار آٹھ سو چالیس انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنوں پرفوج اندر اور باہر دونوں مقامات پر موجود رہے گی۔

سیکریٹری الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ سیلاب یا امن وامان کی بنیاد پربیالیس میں سے کسی حلقے پر انتخابات ملتوی نہیں کیے جاسکتے۔

اجلاس میں وفاقی وزیرخزانہ اسحاق ڈار،پی پی کے رکن قومی اسمبلی مصطفی سیٹھی سیکریٹری دفاع،سندھ،پنجاب اورخیبرپختونخواکےچیف سیکریٹریوں ،نادراکے چیرمین اوراین ڈی ایم اے کے چیرمین سمیت کئی اعلی حکام نے شرکت کی۔۔

گزشتہ روز نیشنل ڈزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے ایک سینئر اہلکار نے اے ایف پی کو بتایا کہ ‘بارشوں کے باعث 334764 افراد متاثر، کم از کم 108 ہلاک اور 104 زخمی ہوچکے ہیں’

انہوں نے کہا کہ بارشوں کی وجہ سے 770 دیہات زیر آب آچکے ہیں جبکہ 2427 گھروں کو نقصان پہنچا ہے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ 2010ء میں ملک کا سب سے بد ترین سیلاب آیا تھا جس سے تقریباً 1800 افراد ہلاک جبکہ دو کروڑ سے زائد افراد متاثر ہوئے تھے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *