آصف زرداری کا اپنی بیٹی کے ساتھ جھگڑا ؟

3

اسلام آباد ۔ پیپلز پارٹی کی خواتین کارکنوں کو مخاطب کرتے ہوئے زرداری نے بتایا کہ ان کی صاحبزادی لیاری سے الیکشن لڑنا چاہتی ہیں جبکہ میں کہتا ہوں آپ نوابشاہ سے کھڑی ہوں اور اسی بات پر جھگڑا ہے۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے داود میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو لوگ تاریخ میں زندہ نہیں رہنا چاہتے وہ پاناما سے ڈرتے ہیں،انہوں نے الیکشن کے حوالے سے پیشگوئی کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کو کچھ نہیں ملے گا کامیابی صرف پیپلزپارٹی کو ملے گی۔ آصف علی زرداری نے کہا کہ جمہوریت کی بقاء کے لیے جتنا بھی لڑنا پڑے لڑیں گے، انہوں نے موجودہ حکومت اور اس کی پالیسیوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے خود کو حکومت میں رکھنے کے لیے طریقہ کار نہیں اپنانا بلکہ ہم نے عوام کو حکومت دلوانے کے لیے طریقہ اپنانا ہے۔ آصف علی زرداری نے کہا کہ اگر میں نے اختیارات پارلیمنٹ کو نہ دیے ہوتے تو اس وقت نواز شریف وزیراعظم نہیں بلکہ صدر ہوتے، اور صدر ہونے کی صورت میں ان کے خلاف کوئی ریفرنس نہیں آ سکتا تھا۔ انہوں نے کہا کہ آمدہ الیکشن میں یہ خرابیاں دور ہوں گی اور تحریک انصاف کو بھی اس کا فائدہ پہنچے گا، اس کا فائدہ عوام یعنی پیپلز پارٹی کو بھی ہو گا۔ انہوں نے بلاول بھٹو کے بارے میں کہا کہ جب بلاول اٹھے گا تو پنجاب سے ہی اٹھے گا، پیپلز پارٹی کی خواتین کارکنوں کو مخاطب کرتے ہوئے زرداری نے یہ انکشاف کیا کہ ان کی صاحبزادی لیاری سے الیکشن لڑنا چاہتی ہیں جبکہ میں چاہتا ہوں وہ نوابشاہ سے کھڑی ہوں اور اسی بات پر ہمارا جھگڑا ہے۔آصف علی زرداری نے کہا کہ سی پیک کا تصور حکومت نے چرا لیا ہے، انہوں نے کہا کہ ہم نے جو تصور دیا ہے وہ طویل المدت ہے اور سندھ میں بھی صنعتیں لگیں گی اور اقتصادی راہداری گیم چینجر نہیں بلکہ خطے کو بدل دے گی:۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *