شعیب اختر کا میتھیوہیڈن کو زخمی کرنے کی کوششوں کا اعتراف!

شعیب اختر نے ورلڈ کپ 2011 کے بعد ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا تھا— فائل فوٹو: اے ایف پی

فاسٹ باؤلنگ ہمیشہ ہی کرکٹ کا حسن رہی ہے اور تیز رفتار اور خطرناک باؤلرز نے اپنی عمدہ باؤلنگ سے ہمیشہ ہی شائقین کو خوب محظوظ کیا ہے۔ ایک دور میں ویسٹ انڈین فاسٹ باؤلنگ لائن اپ نے دنیا بھر کو اپنی کطرناک باؤلنگ سے ڈرایا اور یہی وجہ تھی کہ انہیں ’کالی آندھی‘ کا لقب ملا۔ پاکستانی باؤلرز خصوصاً فاسٹ باؤلنگ نے دنیا کو ہر دور میں ہی بہترین باؤلرز فراہم کیے جس میں فضل محمود، عمران خان، سرفراز نواز، وسیم اکرم اور وقار یونس شامل ہیں لیکن ان مییں شعیب اختر ایک ایسے باؤلر تھے جن سے دنیا بھر کے بلے باز ڈرتے تھے۔

ریٹائرمنٹ کو چھ سال گزرنے کے باوجود سابق پاکستانی فاسٹ باؤلر شعیب اختر دنیا کے تیز ترین فاسٹ باؤلر مانے جاتے ہیں اور انہوں نے ہمیشہ ہی اپنی تیز باؤلنگ سے دنیا کے بڑے سے بڑے بلے بازوں کو گھٹنے ٹیکنے پر مجبور کردیا۔ حال ہی میں ٹوئٹر پر اظہار خیال کرتے ہوئے شعیب اختر نے کہا کہ میں نے سب سے زیادہ بلے بازوں کو زخمی کیا لیکن مجھے کبھی بھی ایسا کرنا پسند نہیں رہا۔ تاہم انہوں نے کہا کہ ایک بلے باز ایسا ہے جسے میں ہمیشہ زخمی کرنا چاہتا تھا اور وہ آسٹریلین بلے باز میتھیو ہیڈن ہیں۔

شعیب نے کہا کہ جب میں کھیلتا تو میری کوشش ہوتی ہے کہ انہیں زیادہ سے زیادہ نقصان پہنچاؤں اور ایسا کئی مواقعوں پر کیا لیکن اب ہم بہترین دوست ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میری سابق آسٹریلین اوپر سے بہترین دوستی ہے اور بہت نفیس اور اچھے انسان ہیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *