اے آر وائی نے بھارت میں سونے کا کاروبارشروع کردیا

Image result for ARY

بھارت میں برانڈڈ سونا بیچنے کا موقع ڈھونڈنے والوں میں دبئی میں موجود اے آر وائے ٹرایڈر نامی کمپنی بھی شامل ہو گئی ہے جو اپنے تمام گاہکوں کو 20 کلو مفت سونا دینے کا ارادہ رکھتی ہے ۔اے آر وائے ٹریڈرز کے ڈائیریکٹر سلمان اقبال نے بتایا کہ اس سیلز پروموشن جو لکی ڈرا کی صورت میں شامل کی گئی ہے کا مقصد بھارت میں اپنی کمپنی کے لیے تجارت کے مواقع پیدا کرنا ہے۔ انہوں نے کہا: ہمارا مقصد دنیا کی اس بہت بڑی مارکیٹ میں اپنے بزنس کےراستے پیدا کرنا ہے ۔ اس وقت یہ مارکیٹ چھوٹے جیولر کے قبضہ میں ہے اور اے آر وائے اپنے پراڈکٹس کو اس مارکیٹ میں شامل کرنے کی خواہش مند ہے۔ اے آر وائے بلینئر کنٹیسٹ انڈین ایکسپریس گروپ آف نیوز پیپرز کے تعاون سے جاری کیا جا رہا ہے۔ ہم اپنے گاہکوں کو رینبو ہارٹس اور ایک گرام سے ایک کلو گرام تک سونا پیش کر رہے ہیں۔ اس سے ہمارے برانڈ کو شہرت ملے گی جس کا مقصد خالص، واضح اور بہترین کوالٹی کا معیار قائم رکھنا ہے۔ یہ مقابلہ ممبئی میں جمعرات کو منعقد کیا گیا تھا۔ اس مقابلے کا اگلا مرکز احمد آباد 23 نومبر، کولکتہ 26 نومبر ، نئی دہلی 1 دسمبر اور چنائی 3 دسمبر ہو گا۔ ولڈ گولڈ کونسل نے بتایا ہے کہ بھارت میں سونے کی ڈیمانڈ میں 1997 کے پہلے تین ماہ میں 19 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ 1998 کے تیسرے کوارٹر میں یہ تعداد البتہ کم ہو کر 17.8 ٹن تک محدود ہو گئی ہے۔اے آر وائے نے پراڈکٹس کی فروخت میٹرو شہروں میں شروع کر دی ہے اور بہت جلد یہ چھوٹے شہروں میں بھی اپنے قدم جمانے کی کوشش میں ہے۔ رینبو ہارٹس کے علاوہ ٹائٹن انڈسٹریز اور گلی کمپنیاں بھی بھارت کو برانڈڈ سونا فراہم کر رہی ہیں۔


courtesy:http://expressindia.indianexpress.com/fe/daily/19981121/32555324.html

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *