عراق کی جنگ بلا جواز تھی: سی آئی اے کی دستاویزات میں اعتراف!

CIA 13برس قبل، عراق کی جنگ میں جانے کا جواز، 93صفحات پر مشتمل ایک خفیہ دستاویز کو قرار دیا گیا تھا، جو مبینہ طور پرسابق عراقی رہنما صدام حسین اور بظاہر اس کی جانب سے چلائے جانے والے بڑے پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں کے متعلق ’’مخصوص معلومات‘‘ رکھتی تھی۔
اب، وہ دستاویز منظر عام پر آ چکی ہے ، جس سے انکشاف ہوا ہے کہ بظاہر اس جنگ میں جانے کا صفر سبب موجود تھا۔اس دستاویز نے یہ انکشاف بھی کیا ہے کہ ’’صدام اور القاعدہ کے مابین نہ تو کسی قسم کے آپریشنل رشتے موجود تھے اور نہ ہی عراق میں بڑے پیمانے پر تباہی پھیلانے والے کوئی ہتھیار ہی ملے تھے‘‘، جن کا کہ اس وقت بش انتظامیہ اور اس کے اتحادی ممالک کی جانب سے الزام لگایا جاتا رہا تھا اورجنہیں عراق پر مسلط کی جانے والی جنگ کی وجوہات میں سے اہم وجوہ قرار دیا گیا تھا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *