فخر زمان ڈبل سنچری بنانے والے پہلے پاکستانی بلے باز بن گئے

بولاوائیو: زمبابوے کے خلاف چوتھے ایک روزہ میچ میں گرین شرٹس نے کئی ریکارڈ بنالیے۔ 

کوئنز اسپورٹس کلب میں زمبابوے کے خلاف پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے قومی ٹیم کے اوپنر فخر زمان اور امام الحق نے پہلی وکٹ پر سب سے زیادہ رنز بنانے کا نیا عالمی ریکارڈ بنالیا۔

دونوں بلے بازوں نے شاندار کھیل پیش کرتے ہوئے 304 رنز شراکت قائم کی جب کہ اس سے قبل طویل ترین شراکت کا ریکارڈ سری لنکا کے پاس تھا، جس کے بلے باز سینتھ جے سوریا اور اوپل تھرنگا نے لیڈز کرکٹ گراؤنڈ میں انگلینڈ کے خلاف جون 2006 میں 286 رنز بنائے تھے۔

پاکستان کے سابق اوپنر عمران فرحت اور محمد حفیظ نے بھی زمبابوے کے ہی خلاف ستمبر 2011 میں پہلی وکٹ پر 228 رنز کی شراکت قائم کی تھی تاہم اب پاکستان کو پہلی وکٹ پر طویل ترین پارٹنرشپ کا نیا عالمی ریکارڈ حاصل ہوگیا ہے۔

فخر زمان ڈبل سنچری بنانے والے پہلے پاکستانی اور عالمی سطح پر سب سے زیادہ انفرادی اسکور بنانے والے پانچویں بلے باز بھی بن گئے۔ انہوں نے 210 کی ناقابل شکست اننگز کھیلی۔

جارح مزاج بلے باز نے پاکستان کی جانب سے سب سے زیادہ انفرادی اسکور بنانے کا سعید انور کا ریکارڈ بھی توڑا، جو انہوں بھارت کے خلاف 194 رنز بنا کر قائم کیا تھا۔

فخر زمان کی ڈبل سنچری بنانے پر سابق کرکٹرز بھی ان کی کارکردگی کو بے حد سراہ رہے ہیں۔

یاد رہے کہ ایک روزہ کرکٹ میں سب سے زیادہ انفرادی اسکور بنانے کا ریکارڈ بھارت کے روہت شرما کے پاس ہے، جنہوں نے نومبر 2014 میں سری لنکا کے خلاف کولکتہ کے ایڈن گارڈن گراؤنڈ میں شاندار اننگز کھیل کر یہ اعزاز اپنے نام کیا۔

نیوزی لینڈ کے مارٹن گپٹل 237 رنز ناٹ آؤٹ، بھارت کے ورندر سہواگ 219، ویسٹ انڈیز کے کرس گیل 215 اور بھارت کے روہت شرما 209 رنز کے ساتھ بالترتیب سب سے زیادہ رنز بنانے والے بلے بازوں میں شامل ہیں۔

قومی ٹیم نے زمبابوے کے خلاف تیسرا سنگ میل 400 رنز کا ہدف دے کر حاصل کیا، اس سے قبل گرین شرٹس نے بنگلادیش کو 385 رنز کا ہدف دیا تھا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *