وزیراعلیٰ سندھ کا جہاز اویس مظفر بغیر اجازت لے اڑے

Exterior-Citation-Mustangاسلام آباد میں صدر آصف زرداری کے ساتھ اجلاس کرکے کراچی واپس آنے سے قبل وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ کا خصوصی جہاز صوبائی وزیر اویس مظفر لے اُڑے ، جس کی وجہ سے وزیر اعلیٰ سندھ اور5 صوبائی وزرا کو مجبوراََ سندھ ہاؤس میں رکنا پڑا ، باخبر ذرائع کے مطابق جمعرات کے روز وزیر اعظم نواز شریف کی جا نب سے صدر آصف زرداری کو الوداعی ظہرانے اور اجلاس میں شرکت کی غرض سے وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ،سینئر وزیر نثار کھوڑو ، صوبائی وزرا اویس مظفر،شرجیل میمن،جام مہتاب ڈہر،منظور وسان اور مراد علی شاہ خصوصی جہاز سے اسلام آباد گئے تھے ،ذرائع کے مطابق وزیر اعظم نواز شریف کی جا نب سے ظہرانے میں شرکت کرنے اور صدر آصف علی زرداری کے ساتھ پارٹی اور صوبائی حکومت کے معاملات پر اجلاس میں شرکت کے بعد جب وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ اور دیگر وزرا کراچی واپسی کے لئے تیار ہوئے تو انہیں مطلع کیا گیا کہ وہ جس خصوصی جہاز میں آئے تھے وہ جہاز صوبائی وزیر اویس مظفر لے کر تنہا کراچی چلے گئے ہیں، ذرائع کے مطابق وزیر اعلیٰ اور دیگر وزرا یہ خبر سنتے ہی حیران و پریشان رہ گئے ، فیصلہ کیا گیا کہ وزیر اعلیٰ سندھ اور کابینہ کے اراکین رات اسلام آباد میں قیام کریں گے ، اس طرح سندھ کے بزرگ وزیر اعلیٰ اور دیگر وزرا نے مجبوری میں سندھ ہاؤس میں قیام کیا، وزیر اعلیٰ اور دیگر وزرا جمعہ کی صبح پی آئی اے کی فلائٹ پی کے 301 میں کراچی آئے ، یاد رہے کہ وزیر اعلیٰ سندھ کا خراب طیارہ دبئی میں زیر مرمت ہے ، جس کی وجہ سے وزیراعلیٰ کو ایک اور خصوصی طیارے سے اسلام آباد جانا پڑا تھا،سندھ کی تاریخ میں یہ پہلا موقع ہے کہ وزیر اعلیٰ کی مرضی کے بغیر کوئی وزیر جہاز لے کر چلا گیا ہو۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *