گھروں کی تعمیر کیسے ؟

 "مائیکل کولوماٹسکی"

اپنی پسندیدہ جگہ پر گھر حاصل کرنا ایک بہت بڑا چیلنج ہوتا ہے۔ ہمیشہ کسی نہ کسی معاملے پر کمپرومائز کرنا ہی پڑتا ہے۔ ایک عام سطح کا گھر اگر بنانا ہو تو کمپرومائز کم کرنا پڑتا ہے ۔ اس سے آپ اپنا گھر بھی مرضی کے مطابق بنوا سکتے ہیں  اور نئے میٹریل  اور سسٹم کے بھی استعمال سے مستفید ہو سکتے ہیں ۔ لیکن اس کی قیمت کیسے طے ہو گی  اور آپ کو کس چیز کے پیسے دینے ہوں گے یہ سوال ہر کسی کے ذہن میں ہوتا ہے۔

 نیشنل ایسو سی ایشن آف ہوم بلڈرز نے حال ہی میں ریزیڈنشل کنسٹرکشن کمپنیوں کا ایک سروے کیا  اور اس کے مطابق قیمت کو  الگ الگ حصوں میں بانٹا تا کہ معلوم ہو سکے کہ گھر کی مکمل تعمیر میں کتنی رقم کس کام پر خرچ کی جاتی ہے۔ سروے کے نتائج ایک عام  سے گھر  جس کی وسعت 2276 سکوئیر فٹ  ہے کی تعمیر کے اخراجات جو کل 427892 ڈالر میں تعمیر کیا گیا کی صورت میں دکھائے گے ہیں۔ اس پوری رقم میں سے 190132 ڈالر کی رقم ٹھیکیداروں اور لاٹ پر خرچ ہوئی  ہے جب کہ باقی رقم تعمیر  پر خرچ کی گئی ہے۔

بقیہ 237760 ڈالر گھر کی تعمیر پر خرچ ہوئے ۔ تو پھر یہ رقم کہاں کہاں خرچ ہوئی؟  میٹریل، زمین، اور مزدوری کی قیمت مختلف ہو سکتی ہے اور اس کا دارو مداد لوکیشن، پر ہوتا ہے  لیکن باقی چیزوں پر خرچ ہونے والی رقم زیادہ تر ایک جیسی ہی رہتی ہے چاہے آپ جہاں کہیں بھی ہوں۔  29 فیصد رقم انٹریر فنشنگ پر خرچ ہوتی ہے جس میں انسولیشن، ٹرمنگ، دروازے، شیشے، پینٹنگ، لائٹنگ، الماریاں، الیکٹرانکس اشیا، فلورنگ، اور فائر پلیس وغیرہ کی تنصیب و تزئین شامل ہے۔

17 فیصد رقم فریمنگ، ٹرسز، شیتھنگ، سٹیل اور دوسرے کاموں پر صرف ہوتی ہے۔

14 فیصد رقم بیرونی فنشنگ جس میں دیواریں، چھت، کھڑکیان اور دروازے شامل ہیں پر خرچ ہوتی ہے۔

14 فیصد پلمبنگ، الیکٹریکل  ایشوز اور ایچ وی اے سی پر خرچ ہو تی ہے۔

11 فیصد حصہ بنیادوں، کنکریٹ، بیک فلنگ وغیرہ کو جاتا ہے۔

7 فیصد حتمی چیزوں جن میں لینڈ سکیپنگ، پورچ، ڈرائیو وے اور کلین اپ شامل ہیں پر خرچ کی جاتی ہے۔

7 فیصد رقم پرمٹ، انسپیکشن، آرکیٹیکچر، اورانجینئرنگ فیسوں پر لگ جاتی ہے۔

2 فیصد رقم باقی متفرق معاملات پر  خرچ ہوتی نظر آتی ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *