جیتوں تو تجھے پاوں

مصنفہ: سعدیہ عابد تحریر : محسن علی
سعدیہ عابد  ایک معروف لکھاری ہیں انہوں نے بھت کم وقت میں بھت کامیابیاں حاصل کی انکی تاریخ پیدائش تین اگست ہے اور تعلق کراچی شھر سے ہے  انہوں نے پاکستان کے مشہور ڈائجسٹوں  میں لکھا   جن میں قابل ذکر یہ ہیں  سچی کہانیاں ڈائجسٹ ۔دوشیزہ ڈائجسٹ۔حنا ڈائجسٹ ردا ڈائجسٹ۔آنچل ڈائجسٹ۔ اور حجاب ڈائجسٹ ہیں انہیں زیادہ شہرت آن لائن  پاک سوسائٹی اور کتاب گھر پر  ناولز لکھنے سے ملی جہاں چالیس سے زیادہ ویوز موجود ہیں  انکے جو پہلے ناولز جو چھپ کر مارکیٹ میں آچکے ہیں انکے نام  بند قبا کھلنے لگی جاناں ۔میری چاہت میری ریاضت۔ پلکوں پر چمکتے آنسو۔قفس کے پنچھی ۔ اور جنون عشق کی روٹھی رت ہیں انکا لکھا ناول  جنون عشق کی روٹھی رت آن لائن کتاب گھر پر شائع ھوا جو بھت پسند  کیا گیا  اب دسمبر 2018 میں علم و عرفان پبلشرز سے انکا نیا ناول   جیتوں تو تجھے پاوں  چھپ کر مارکیٹ میں آچکا ہے  انکا آن لائن چھپنے والا دوسرا ناول ہے  جو بھت لوگوں نے پسند کیا  سعدیہ عابد  اگرچہ تواتر  سے مختلف ڈائجسٹوں میں لکھ رہی تھیں مگر جیسے ہی انہوں  نے آن لائن لکھنا شروع کیا جہاں لاکھوں لوگ پڑھتے پھر سمجھ آئی انکا فیصلہ درست تھا سعدیہ عابد نے دیگر مصنفین کو بھی ایک راہ دکھا دی  جیتوں تو تجھے پاوں ناول نے نومبر 2016 سے اپنی پہلی قسط سے لے کر اب تک قارئین کو اپنے سحر میں جکڑے رکھا یہ ناول  کتاب گھر کے مقبول ترین ناولز میں شامل ہے
سعدیہ عابد ناول کے شروع میں لکھتی ہیں انہوں نے بغیر پلاٹ کے لکھنا شروع کیا مصروفیت کے باوجو کہیں بھی ناول کا تسلسل بکھرا نہیں ۔میں یہ نہیں  کہوں گی کہ یہ ناول میں نے لکھنا چاہا  تھا کیونکہ مجھے لگتا ہےکہ یہ ناول  میں نے نہیں لکھا  مجھ سے لکھوایا گیا جس کے میں اپنے پاک پروردگار کی شکر گزار ھوں ۔
اس ناول میں  عورتوں  کے ساتھ پیش آنے والے اچھے برے معاملات حادثات و واقعات بیان کرنے کی  کوشش کی گئ مگر بھت کامیاب رہی  اس ناول میں عورت  قربانی دیتی بھی ملے گی اور قربانی مانگتی بھی اس ناول میں سعدیہ عابد نے برے کا برا انجام دکھایا تاکہ لوگ  عبرت پکڑیں اس ناول میں ہمارے معاشرے کے بھت سے  پہلوؤں سے پردہ ہٹایا گیا  تاکہ لوگ  سبق حاصل کریں  اس ناول کو پڑھنے کے بعد میں بے اختیار یہ کہہ اٹھا تھا
محبت روح سے ھوتی ہے جو پاک ھوتی ہے جسم سے محبت ہوس ھوتی ہےبلگن سچی ھو تو منزل مل ہی جاتی ہے صرف صبر کرنا چاہیے اور ثابت قدم رہنا چاہیے۔
اس ناول کو شروع کرنے کے بعد آپ آخر تک پڑھے بغیر نہ رہے گئے  بھت سے لوگ اس انتظار میں تھے کہ یہ ناول چھپ کر مارکیٹ میں آئے اور لوگ اپنے پسندیدہ ناول کو لائبریری کی زینت بنا سکیں ۔ تو دیر کس بات کی  ضرور  خریدیں پڑھیں گفٹ کریں قیمت صرف 800 روپے ہے قیمت نہیں  کتاب دیکھیں کتاب سے محبت کریں  امید ہے سعدیہ عابد لکھتی رہیں گی ہمیں معیاری ادب پڑھنے کو ملتا رہے گا اللّٰہ  پاک سعدیہ عابد کو اور زیادہ زور قلم عطا فرمائے آمین

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *