داعش سے لڑائی میں کردوں کا امریکی جنگجو ہلاک

 ISISعراق: بدھ کے روز کرد فورسز کے ذمہ داران نے بتایا کہ ایک امریکی جنگجو، جو شام میں کردفورسز کے ساتھ مل کر لڑ رہا تھا، دورانِ جنگ مارا گیا ہے ۔ امکان ظاہر کیا جا رہا ہے کہ انتہاء پسندوں کے ایک گروہ میں شامل ہو کر کسی دوسرے کے خلاف لڑتے ہوئے مارا جانے والا یہ پہلا امریکی شہری تھا۔
وائے پی جی کے طور پر معروف کرد جنگجوؤں کے ایک گروہ کے ساتھ کام کرنے والے ایک اہلکار نصیر حاجی نے بتایا کہ کیتھ برووم فیلڈ، جس کا تعلق میٹا چوسٹس سے تھا،کوبانی کے سرحدی قصبے کے قریب کنٹر نامی شامی گاؤں میں ایک لڑائی میں 3جون کو مارا گیا۔وہ حالات جو برووم فیلڈ کی موت پر منتج ہوئے، پر روشنی ڈالے بغیر حاجی نصیرنے بتایا کہ برووم نے نوم دی گیرے گیلہٹ رامان کے تحت 24فروری کو وائے پی جی میں شمولیت اختیار کی تھی۔
امریکہ کے اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے ترجمان جیف رتھک نے برووم فیلڈ کی موت کی تصدیق کی لیکن اس کی موت کا سبب بننے والے حالات سے متعلق کسی بھی قسم کی تفصیلات فراہم کرنے سے انکار کر دیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ امریکہ اس کے خاندان کو تسلی اور معاونت فراہم کر رہا ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *