تجزیہ کار زیدحامد کو 8سال قید اور 1200کوڑوں کی سزا

zaid-hamidٹی وی مباحثوں کے معروف کردار اور اپنی نوعیت کے منفرد’’ دفاعی تجزیہ کار‘‘ زید زمان حامد کو سعودی عدالت نے آٹھ سال قید اور 1200کوڑوں کی سزا سنا دی ہے۔ تاہم ریاض میں پاکستانی سفارت خانہ اس سزا کے حوالے سے ابھی تک خاموش ہے ۔خیال رہے کہ زید حامد کو چند دن قبل اس وقت گرفتار کیا گیا تھا جب وہ اپنی اہلیہ ہمراہ سعودی عرب کے نجی دورے پر تھے۔زید حامد پر الزام ہے کہ انہوں نے اپنی تقاریر میں سعودی حکومت کو ہدف تنقید بنایا ہے۔اسلام آباد میں دفتر خارجہ کے ترجمان کے مطابق’’ ہمیں بتایا گیا ہے کہ زید حامد دو ہفتے قبل گرفتار کیے گئے اور وہاں پر موجوپاکستانی سفارت خانہ مقامی عہدیداروں سے مسلسل رابطے میں ہے تاکہ مسئلے کا کوئی ممکنہ حل تلاش کیا جاسکے‘‘۔انہوں نے مزید بتایا کہ’’ سفارت خانے کی کوششوں کی بدولت زید حامد کیان کی اہلیہ سے فون پربات کروائی گئی۔
خیال رہے کہ2013میں زید حامد پران کے ایک سابق پرستار نے یہ الزام لگایا گیا تھا کہ وہ سیکیورٹی اداروں کے تخواہ دار ملازم ہیں اور انہیں ہیئت مقتدرہ کی مخالفت کرنے والوں کے خلاف نفسیاتی آپریشن پر مامور کیا گیا ہے ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *