1926ء میں سمارٹ فون کے بارے میں پیش گوئی کرنے والا سائنس دان

Scienceاگر آپ کو یہ بات بتائی جائے کہ 1926ء میں ایک سائنس دان نے آج کی جدید دنیا میں استعمال ہونے والے سمارٹ فون اور وائرلیس ایجادات کے بارے میں 1926ء میں بتا دیا تھا تو آپ کو یقین نہیں آئے گا۔ لیکن یہ حقیقت ہے کہ سربیائی امریکی سائنس دان نکولا ٹیسلا نے ہماری زندگیوں کو بدل دینے والے آلات مثلاً سمارٹ فون اور ابلاغ کی دوسری جدید ترین ایجادات کے بارے میں پیش گوئی کر دی تھی۔ ٹیسلانے جدید آلاتِ ابلاغ کے بارے میں یہ پیش گوئیاں 1926ء میں ایک میگزین کو انٹرویو دیتے ہوئے کی تھیں۔ ٹیسلا کی 159سالگرہ کے موقع پر انہیں خراج تحسین پیش کرنے کے لیے ان کے انٹرویو کا اقتباس پیش کیا جا رہا ہے۔
’’جب وائرلیس مکمل طور پر کام کرنے لگے گاتو ساری زمین ایک بہت بڑے دماغ میں ڈھل جائے گی، جو کہ حقیقتاً ہے بھی، اورتمام چیزیں ایک بہت بڑے کُل کے اجزا کے طور پر کام کرنے لگیں گے۔ فاصلوں سے قطع نظرہم ایک دوسرے سے فوری بات قائم کر سکیں گے۔ نہ صرف یہ بلکہ ٹیلی وژن اور ٹیلی فونی کے ذریعے ہم ایک دوسرے کو دیکھ اورسن سکیں گے بالکل ایسے جیسے ہم ایک دوسرے کے آمنے سامنے کھڑے ہیں، چاہے ہمارے درمیان میلوں کا فاصلہ ہو؛ اور یہ سب کچھ ہم جس آلے کی مدد سے کریں گے وہ ہمارے موجودہ ٹیلی فون کی نسبت اتنا سادہ اور چھوٹا ہوگا کہ ہم اسے اپنی جیکٹ کی جیب میں ڈال کر لیے پھریں گے۔ ہم صدر کی تقریب حلف برداری، ورلڈ سیریز کا میچ، زلزلوں سے پھیلنے والی تباہی یا جنگ کی وحشت انگیزی جیسے واقعات کو دیکھ اور سن سکیں گے ، بالکل ایسے جیسے ہم موقع پرموجود ہیں۔ جب بجلی کی وائرلیس ٹرانسمیشن ممکن ہو جائے گی تو ٹرانسمیشن کی دنیا میں انقلاب آ جائے گا۔ ابھی بھی موشن پکچرز تھوڑے سے فاصلے پر تصویریں ٹرانسمٹ کرتی ہے۔ کچھ ہی عرصے میں اس فاصلے کی کوئی حد نہیں رہے گی، کچھ عرصے سے میری مراد صرف چند سال ہیں۔ تصاویر تار کے ذریعے ٹرانسمٹ کی جائیں گی--پوائنٹ سسٹم کے ذریعے انہیں ٹیلی گراف کرنے کا تجربہ تیس سال قبل کامیابی سے ہم کنار ہو چکا ہے۔ جب پاور کی وائر لیس ٹرانسمیشن عام ہو جائے گی تو یہ طریقے اتنے موثر ثابت ہوں گے جتنا بھاپ کے انجنوں کے مقابلے میں بجلی سے چلنے والے انجن۔‘‘

Collier'sنامی میگزین میں شائع ہونے والے اس انٹرویو کو Twenty First Century Booksنے دوبارہ شائع کیا ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *