ہم سب کسی فرد نہیں قانون کے تابع ہیں : چیف جسٹس

chief justiceچیف جسٹس آف پاکستان جسٹس انور ظہیرجمالی کا کہنا ہے کہ ہم سب کسی فرد کے نہیں بلکہ قانون کے تابع ہیں اس لئے عوام اور ریاست کے درمیان فاصلے کم کرنا ہوں گے۔عدالتی اصلاحات سے متعلق سینیٹ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان کا کہنا تھا کہ آئین میں ریاست کے خدوخال کی تشریح کی گئی ہے، ریاست جمہور کی منشا پر قائم ہوئی، قانون پرعملدرآمد کے بغیرترقی کی راہ پر گامزن نہیں ہوا جاسکتااس لئے عوام اور ریاست کے درمیان فاصلے کم کرنا ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ قانون کی نظرمیں تمام شہری برابرہیں، ریاست کا تصور سیاسی مفاہمت پراستوار ہے اس لئے حکومت کو ملنے والے مینڈیٹ کے تقاضے پورے کرنا ہوں گے۔
چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کا کہنا تھا کہ ملک کا مستقبل عدالیہ کی آزادی، آئین کی عملداری میں ہی مضمر ہے، ریاست کے باشندوں کو یہ نظر آنا چاہئے کہ کوئی بھی شخص قانون سے بالا نہیں، قانون کی بالادستی کو روز مرہ زندگی، ریاستی امور کی انجام دہی اور عوام کے اپس کے معاملات میں مرکزی حیثیت حاصل ہے جس پر عمل درامد ناگزیرہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *