بھارت کی مارکیٹ میں پاکستانی شراب

wineپاکستان کی معروف شراب ساز کمپنی مری بریوری نے بنگلور سے تعلق رکھنے والے ایک تاجر کو اپنی مری برینڈبوتلوں میں بھرنے اور ہِندوستانی بازار میں فروخت کرنے کی ایک فرنچائزدی ہے۔مری بریوری کے چیف ایگزیکٹِو افیسر، اسفندیار بھانڈرانے جمعہ کو ٹی او آئی کو بتایا، ’’واہگہ اٹاری بارڈر سے ہندوستان کوشراب برآمد کرنے کی اجازت نہیں تھی، لہٰذا ہم نے بنگلورکے ایک تاجر کو اپنی کمپنی کی فرنچائز کی پیشکش کرنے کا فیصلہ کیا تاکہ وہ ہندوستان میں مری کی شراب کو تیار کرے، بوتلوں میں بھرے اور بازار میں پھیلائے۔ یہ پاکستان اور ہندوستان کے درمیان تجارتی تعلقات کو مضبوط بھی کرے گا۔ پیداوار جلد ہی بازار میں پہنچ جائے گی۔‘‘
بھانڈرا نے کہا کہ مری بریوری شراب، سِنگل مالٹ وہسکی، سکاچ وہسکی، ووڈکا اور برینڈی پیدا کرتی ہے۔اس نے کہا ، پاکستانی قانون کے تحت، مسلمانوں کے لئے شراب کے مشروبات کو استعمال کرنا منع ہے جبکہ غیر مسلموں اور غیر ملکیوں کو استعمال کے اجازت ناموں کی ضرورت ہوتی ہے۔ ’’ہم صرف فائیو سٹار ہوٹلوں میں اپنی شراب کی مصنوعات فروخت کرتے ہیں۔پاکستان الکوحل کی مصنوعات کی برآمدسے بھی منع کرتا ۔ اب سے ہم ہِندوستان میں اپنی شراب کے تقسیم کار تلاش کرنے میں دلچسپی رکھتے ہیں، ‘‘بھانڈرا نے کمپنی کے کاروباری منصوبوں کے متعلق کہا۔
بھانڈرا جو ایک پارسی ہے ،نے کہاکہ ہندوستان میں ایک ہندوستانی کارکن، ہمارے برینڈ (مری)اورفارمولے کی شراب ساز کمپنی میں شراب بنائے گا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *