ملٹری پولیس حملہ: استعمال ہونے والا اسلحہ 10 دیگر واراداتوں میں بھی استعمال ہوا

karachi attackکراچی میں ملٹری پولیس پر حملے کے بعد کراچی آپریشن کو مزید تیز کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے، ذرائع کے مطابق دہشت گردوں کے خلاف سکیورٹی فورسز بھرپور کارروائیاں کریں گی، حساس اداروں کی جانب سے حملوں کا خدشہ پہلے ہی ظاہر کیا گیا تھا، تاہم، ذرائع کے مطابق، پولیس اور رینجرز متحد ہو کر دہشت گردوں کے خلاف کریک ڈاو¿ن کریں گی، دوسری جانب ملٹری پولیس پر حملے میں استعمال ہونے والے اسلحہ کی فرانزک رپورٹ بھی تیار کر لی گئی ہے۔ ذرائع کے مطابق ملٹری پولیس پر حملے میں استعمال ہونے والا اسلحہ کراچی میں 10 وارداتوں سے میچ کر گیا ہے۔
20 نومبر کو بلدیہ اتحاد ٹاو¿ن میں رینجرز اہلکاروں پر بھی اسی اسلحہ سے فائرنگ کی گئی۔ حملے کے نتیجے میں 4 رینجرز اہلکار شہید ہو گئے تھے۔ یہی اسلحہ ڈاکٹرز اور پولیس اہلکاروں کے قتل میں بھی استعمال ہوتا رہا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اسلحہ پہلے ضلع ویسٹ میں استعمال کیا گیا۔ تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ ملزموں کو جلد گرفتار کر لیں گے۔

ملٹری پولیس حملہ: استعمال ہونے والا اسلحہ 10 دیگر واراداتوں میں بھی استعمال ہوا” پر ایک تبصرہ

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *