اسلام آباد میں ’ہارٹ آف ایشیا‘ کانفرنس کا آغاز ہو گیا

پاکستان کے وزیرِ اعظم نواز شریفHOA اور افغان صدر اشرف غنی نے اسلام آباد میں افغانستان کے بارے میں منعقد ہونے والی’ہارٹ آف ایشیا‘ کانفرنس کا باقاعدہ افتتاح کر دیا ہے۔ہارٹ آف ایشیا‘ کانفرنس استنبول عمل کا حصہ ہے، جو افغانستان میں قیامِ امن کے لیے سنہ 2011 میں شروع کیا گیا تھا۔اس کانفرنس کے ارکان کی تعداد 14 ہے اور بدھ کو اس سلسلے کے پانچویں وزارتی اجلاس میں بھارت سمیت دس ممالک کے وزرائے خارجہ بھی شریک ہو رہے ہیں۔افغان صدر اشرف غنی اس کانفرنس میں شرکت کے لیے بدھ کی صبح پاکستان پہنچے تھے۔افغان صدر کی آمد پر وزیر اعظم نواز شریف نے نور خان ایئر بیس پر ان کا استقبال کیا اور انھیں 21 توپوں کی سلامی بھی دی گئی۔منگل کو’ہارٹ آف ایشیا‘ کانفرنس کے آغاز سے قبل اس میں شریک ممالک کے اعلیٰ حکام کے اجلاس سے خطاب کے دوران وزیرِ اعظم پاکستان کے مشیر برائے امورِ خارجہ سرتاج عزیز نے کہا تھا کہ پاکستان افغانستان میں استحکام اور پائیدار امن کا خواہاں ہے کیونکہ افغانستان میں عدم استحکام پاکستان کے مفاد میں بھی نہیں ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *