حویلی لکھا کا تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کسی مسیحا کا منتظر

lakha

حویلی لکھا (نما ئندہ خصوصی)تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال کسی مسیحا کا منتظر ڈاکٹرز ،لیڈی ڈاکٹرز و دیگر عملہ کی شدید کمی ایمبولینس سروسز بند جدید مشینری نا ہونے کے باعث عوام کو شدید مشکلات کا سامنا تفصیلات کے مطابق حویلی لکھا اور گردنواح کی لاکھوں کی آبادی کو علاج معالجہ مہیا کر نے کیلئے سرکاری طور پر ایک ہی ہسپتال موجود ہے ۔جوکہ عوام کو مسیحائی فراہم کرنے کی بجائے خود کسی مسیحا کا منتظر ہے ہسپتال میں موجود انتہائی کم ڈاکٹرز و دیگر عملہ انتہائی کم وسائل کے ساتھ اپنے مقدس فرض کی بجاآوری کیلئے دن رات مصروف ہے لیکن زیادہ آبادی ہونے کے باعث مریضوں کا رش لگا رہتا ہے نا کافی سہولیات اور ڈاکٹرز کی کمی کے باعث ڈلیوری ،آپریشن ،ہیپاٹیٹس ،بلڈ پریشر ، دل ،شوگر ،سمیت دیگر مریضوں کو علاج کیلئے دوسرے شہروں یا پرائیویٹ ہسپتالوں میں جانا پڑتا ہے جن کا علاج انتہائی مہنگا ہونے کے باعث عام آدمی کی پہنچ سے باہر ہے۔جس کے باعث بہت سے مریض اپنے گھر میں پڑے پڑے بغیر علاج کے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں جب کہ خواتین کیلئے ڈلیوری کی سہولت صرف فائلوں تک محدود ہیں ہسپتال انتظامیہ کے مطابق فنڈز کی کمی کے باعث ایمبو لینس سروسز مہیا نہیں کی جا سکتی جبکہ ہسپتال میں ادویات کی بھی شدید کمی ہے اہل علاقہ نے حویلی پریس کلب رجسٹرڈ حویلی لکھا کے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلی پنجاب ،کمشنر ساہیوال ،ڈی سی او اوکاڑہ اور ایم این اے میاں معین احمد وٹو سے فوری ایکشن لینے کی اپیل کی ہے ہسپتال میں ڈاکٹرز ،سٹاف اور فنڈز کی کمی کو دور کیا جائے تاکہ ہسپتال میں آنے والے مریضوں کو صحت کی تمام سہولیات میسر ہوں جوکہ ہر شہری کا بنیادی حق ہے ۔اور قیمتی جانوں کے ضیاع سے بچا جا سکے ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *