شلوار قمیض کا رواج کب شروع ہوا ؟

Shalwar Qameez

ہم شلوار قمیض بہت شوق سے پہنتے ہیں لیکن کبھی آپ نے سوچا ہے کہ اصل میں یہ لباس کہاں سے آیا؟ جب سکندر اعظم کی فوجیں برصغیر میں آئیں تو اپنے ساتھ مختلف طرح کے کھانے اور لباس کے انداز لائیں جن میں بھیڑ کا نمکین گوشت اور شلوار قمیض شامل تھا۔

جب سکندر اعظم واپس گیا تو اس کے اکثر فوجی اسی علاقے میں رہ گئے ،یہیں مقامی لوگوں سے شادیاں کرلیں اور ساتھ ہی ان کے کھانے اور لباس بھی مقامی لوگوں میں رچ بس گئے۔اس طرح سے ناصرف کھانا اور لباس بلکہ انجیئنرنگ اور فوجی سازوسامان بنانے کے کارخونوں میں بھی سکندر اعظم کے فوجیوں نے اہم کردار ادا کیا۔

شلوار قمیض ایک آرامدہ لباس ہے اور اسے پہن کر آپ سکون محسوس کر سکتے ہیں۔ اس کے علاوہ آج کل مارکیٹ میں آپ کو شلوار قمیض کے دیدہ زیب اور جدید ڈیزائین آسانی سے مل سکتے ہیں۔ شلوار قمیض میں استعمال ہونے والے کپڑے کی مختلف کوالٹی کے ساتھ آج کل کڑھائی کے بےشمار ڈیزائن بھی بازار میں دستیاب ہیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *