کنگنا راوت کے بچپن کی تلخ یادیں

Kangna Rawat

اگر کسی لڑکی کو پیدائش سے ہی یہ احساس دلایا جائے کہ اس کی پیدائش کے وقت خوشی نہیں بلکہ ماتم کا ماحول تھا تو آپ سوچ سکتے ہیں کہ اس کی شخصیت پر کیا اثر پڑے گا۔نیشنل ایوارڈ یافتہ اداکارہ کنگنا رناوت نے انتہائی جرات مندی کے ساتھ اپنی زندگی کی اس تلخ حقیقت کو سب کے سامنے ظاہر کرتے ہوئے بتایا کہ اپنے گھر میں وہ ایک ’ان چاہی (غیرمطلوب) بچی تھیں۔‘ ان کے اس انکشاف کے بعد ان کے والد امر دیپ راناوت نے بھی کنگنا کے ماضی کی پرتوں کو کھولنا شروع کیا۔ انھوں نے بتایا کہ وہ ہماچل پردیش میں رہتے تھے اور جب ان کی دوسری بیٹی کنگنا ان کے گھر پیدا ہوئیں تو ان کے گھر میں ماتم چھا گیا اور لوگ ان کے گھر افسوس کے لیے آتے تھے۔

انھوں نے بتایا: ’لیکن کنگنا نے ایک کامیاب اداکارہ بن کر نہ صرف ایک مثال قائم کی بلکہ عورتوں اور لڑکیوں کے حقوق کی مہم کا حصہ بنیں۔‘ کنگنا نے اپنی بڑی بہن رنگولی پر تیزاب کے حملے کے بعد ان کا پورا ساتھ دیا اور اب وہ اس پر فلم بنانے کا ارادہ رکھتی ہیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *