پاکستان فیڈرل یونین آف کالمسٹ لاہور کے زیراہتمام ٹی پارٹی

رپورٹ :توقیر ساجد تقی
toqeer sajid naqi
باغ جناح کے قلب میں واقع کاسمو کلب کی لائبریری میں پاکستان فیڈرل یونین آف کالمسٹ کے ممبران کے اعزازمیں پرتکلف چائے پارٹی (البتہ باقی لوازما ت بھی شامل تھے)کا اہتمام کیا گیا ۔یونین کے صدر شہباز وڑائچ کی زیر صدرارت اس اجلاس میں ممبران و مہمان کالم نگار بھی شریک تھے ۔ کاسمو کلب کی لائبریری جناح باغ کے اندر ہے۔ یہاں آنے کے لئے خوبصورت باغ میں سے گزر کر آناپڑتا ہے۔ایسے ہی چائے کے حصول میں ممبران و مہمانان گرامی کی سحر انگیز گفتگو سننے کو ملی ۔نشست میں صدر محترم کی طرف سے ایجنڈا کا آغاز کیا گیا تو پہلے مرحلہ میں تمام شرکاء محفل کا تعارف ہوا مختصر تعارف کے سلسلہ کے بعد 2013میں قائم ہونے والی فیڈرل یونین کی ترقی و مقبولیت میں اضافہ کیلئے شرکاء اجلاس سے آراء طلب کی گئی سماء وصحافت سے مربوط کالم نگارمحترم رزاق صاحب نے اپنے مخصوص لہجہ میں حاضرین کے دلوں کو گرمایا اور آراء و تجاویز پیش کی انہوں نے کہا کہ محفل میں اکثریت نوجوانوں کی ہے اور حقیقی تبدیلی انہی نوجوانوں سے آتی ہے انہوں نے اپنی گفتگو میں صدر محترم کی عمر23سال کو بھی گفتگو کا محور بناتے ہوئے محفل کو پرلطف بنائے رکھا ۔تجاویز میںیونین کا آفس ،سالانہ پروگرام کو مرتب کرنا اوریونین کے اخراجات کے لئے وسائل کا تعین لازمی قرار دیا ۔  فرید رزاقی صاحب نے نشست میںرزاق صاحب کی آراء کو قیمتی جانتے ہوئے اپنی رائے کا بھی اظہار کر ڈالا جبکہ صغیر احمد رامے صاحب کی باری آئی تو انہوں نے پرکشش باتوں سے سامعین کی توجہ کو اپنی طرف مرکوز کرلیا اور کہا کہ کالم نگار کی بات دل و دماغ سے نکلتی ہے جو معاشرہ میں آگاہی کا سبب رکھتی ہے ۔رامے صاحب محفل میں ستاروں کے گرد چاند کی صورت نمایاں تھے اور انہوں نے ایک بہترین تجویز کی طرف متوجہ کیا کہ ایسی نشستوں کو جاذب بنانے کیلئے کسی معروف کالم نگار کے تجربات سے استفاد ہ کرنے کیلئے جان محفل بنانا چاہئے،  مشرق اخبار سے منسلک ساجد خان صاحب کی بار ی آئی تو خوشگوار ہوا کے جھونکے کا احساس ہوا  انہوں نے شرکاء کو اپنی کاشوں سے آگاہ کیا تو سب داد دئے بغیر نہ رہ سکے خان صاحب نے صدر محترم سمیت سب کو خوشخبری دی کہ لاہورلیبرٹی میںیونین کا اپنا آفس تمام تر سہولیات کے ساتھ بن چکا ہے اور ساتھ ہی بتلایا کہ نیشنل بک فائونڈیشن کی طرف سے پی ایف یو سی کے ممبرز کو یہ خصوصی آفر حاصل ہے کہ وہ انٹرنیشنل موضوعات پر لکھ سکتے ہیں باقی ممبران کی طرف سے بھی یونین کی مضبوطی و ترقی کیلئے مختلف تجاویز کا تبادلہ ہوتا رہا اور پھر بالآخر چائے اپنے تمام تر لوازمات کے ساتھ تمام شرکاء کو پیش کی گئی چائے کے آخری سیپ لیتے ہی نشست اختتام پزیر ہوئی ،نشست کے اختتام پر ممبران،مہمان گرامی اور لٹریسی سوسائٹی کاسمو کلب کے انچارج کے ہمراہ فوٹو سیشن کا مرحلہ بھی سورج غروب ہونے کے ساتھ ہی ختم ہوا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *