متحدہ کو سندھ حکومت میں شمولیت کی پھر دعوت

Rahman malik

پاکستان پیپلزپارٹی کے وائس پریزیڈینٹ برائے اوورسیزاورسابق وزیرداخلہ سینیٹررحمن ملک نے جمعے کوایم کیوایم انٹرنیشنل سیکریٹریٹ لندن میں ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی کے ارکان سے ملاقات کی۔

اس سلسلے میں جاری بیان کے مطابق ملاقات میں رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینرندیم نصرت،رابطہ کمیٹی کے ارکان طارق جاوید،کنورنوید،محمدانور،واسع جلیل،محمداشفاق ،مصطفے عزیزآبادی اورقاسم علی رضاشریک تھے۔ سینیٹررحمن ملک نے صدرزرداری کی جانب سے الطاف حسین کیلیے خیرسگالی کاپیغام پہنچایااورنیک خواہشات کااظہارکیا،انھوں نے ملک اورجمہوری نظام کے استحکام کیلیے الطاف حسین کے کردارکوسراہا،ملاقات میں پاکستان کے مجموعی سیاسی حالات خصوصاًسندھ کی صورتحال،ایم کیوایم پیپلزپارٹی تعلقات اورباہمی دلچسپی کے امورپر تفصیلی تبادلہ خیال کیاگیا،رحمٰن ملک نے پیپلزپارٹی کی قیادت کی جانب سے ایم کیوایم کوایک بارپھر حکومت میں شمولیت کی دعوت دی اورکہاکہ ایم کیوایم اورپیپلزپارٹی ماضی میں بھی امن واستحکام اور جمہوریت کے فروغ کیلیے ایک ساتھ کام کرچکی ہیں اوراب بھی سندھ میں امن استحکام اورجمہوری نظام کے وسیع ترمفادمیں دونوں جماعتوںکوایک دوسرے کے ساتھ تعاون اورمل کرکام کرناچاہیے۔

رابطہ کمیٹی کی جانب سے گفتگوجاری رکھنے پر تفاق کیاگیااوراس بات کااعادہ کیاگیاکہ ایم کیوایم حکومت میں شامل ہویانہ ہوملک خصوصاًسندھ میں امن واستحکام جمہوریت کے فروغ اورخطے میں استحکام کیلیے ایم کیوایم اورپیپلزپارٹی کے درمیان بہترتعلقات کیلیے باہمی رابطوں اورتعاون کاسلسلہ جاری رہناچاہیے۔ملاقات میں آئندہ صدارتی انتخابات کے حوالے سے بھی گفتگوہوئی اوراس بات پراتفاق کیاگیاکہ صدارتی انتخاب کے شیڈول پرنظرثانی ہونی چاہیے اورصدارتی انتخاب قومی وصوبائی اسمبلیوںکی نشستوں پرضمنی انتخابات کے بعدمنعقدہونے چاہئیں۔رابطہ کمیٹی نے سینیٹررحمن ملک کوان کے صاحبزادے عمررحمٰن کے ایکچوریئل سائنسزمیں گریجویشن کرنے پر الطاف حسین کی جانب سے مبارکباد پیش کی اوران کیلیے نیک تمنائوں کااظہارکیا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *