ڈولفن مچھلیاں ایک دوسرے کو نام سے پکارتی ہیں :سائنسدان

karachi-liyari_400

سائنسدانوں کی ایک تحقیق کے مطابق ڈولفن مچھلیاں ایک دوسرے کو نام سے پکارتی ہیں۔محققین نے انکشاف کیا ہے کہ بچے پیدا کرنے والی مچھلی کی یہ نسل ایک دوسرے کی شناخت کے لئے مخصوص سیٹی کا استعمال کرتی ہے اورجب کسی ڈولفن کو اپنے لئے دی جانے والی آواز سنائی دیتی ہے تو وہ اس کا جواب دیتی ہے۔ سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ڈولفنز ساحل سے دور کسی نشان کے بغیر ایسے ماحول میں رہتی ہیں جہاں انہیں ایک دوسرے کے ساتھ رابطے میں رہنے کے لئے انتہائی مؤثر نظام کی ضرورت ہے ۔اکثر و بیشتر وہ ایک دوسرے کو نہیں دیکھ سکتیں اور پانی کے اندر قوت شامہ کا بھی استعمال نہیں ہو سکتا اسلئے ڈولفن مخصوص قسم کی سیٹی کا استعمال کرتی ہیں جس طرح انسان ناموں کا استعمال کرتے ہیں۔سائنسدانوں نے ڈولفن کے ایک گروپ کی آوازوں کو ریکارڈ کیا اورپھر سمندر میں سپیکرز کے ذریعے ان آوازوں کو بجایاگیا جس میں یہ بات سامنے آئی کہ ہرڈولفن نے صرف اپنی ہی آواز پر رد عمل ظاہر کیا اور جواب میں سیٹی بجائی جیسے وہ سیٹی اس کا نام ہو۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *