تین روز بھوکے رہناپورے مدافعتی نظام کی تعمیر نو کر سکتا ہے:جدیدتحقیق

tape 1ایک تحقیق کے مطابق، کم از کم تین روز تک بھوکا رکھ کر کسی فرد کے مکمل مدافعتی نظام کو دوبارہ جوان کیا جا سکتا ہے کیونکہ یہ عمل خون کے نئے سفید خلیوں کو پیدا کرنا شروع کرکے جسم کوزیادہ توانا اور متحرک کر دیتا ہے۔
سائنسدانوں کے مطابق، کم از کم تین روزتک بھوکا رہنا حتیٰ کہ بڑی عمر میں بھی پورے مدافعتی نظام کو ازسر نو وجود میں لا سکتا ہے۔
ہر چند کہ غذائی ماہرین بھوکا رہنے کو ایک غیر صحتمندانہ فعل قرار دے کر اس پر تنقید کرتے رہے ہیں تاہم نئی تحقیق کہتی ہے کہ جسم کو بھوکا رکھنابنیادی خلیوں کو جسم کے نئے سفید خلیے پیدا کرنے کی تحریک دیتا ہے جو انفکشن کی موت کا باعث بنتے ہیں۔
جنوبی کیلفورنیا کی یونیورسٹی کے سائنسدان کہتے ہیں کہ یہ دریافت بالخصوص ان لوگوں کے لئے مفید ہو سکتی ہے جن کا مدافعتی خراب ہے، مثلاًکیمو تھیرپی کرانیوالے کینسر کے مریض۔
یہ طریقۂ کار ان بڑی عمر کی خواتین کیلئے بھی مفید ثابت ہو سکتا جن کا مدافعتی نظام عمر زیادہ ہونے کے سبب کم مؤثر ہو چکا ہے اور ان کے لئے حتیٰ کہ عام بیماریوں سے لڑنا بھی مشکل ہو چکا ہے۔
تحقیق کار کہتے ہیں کہ بھوکا رہنا ’’تعمیر نو کا سوئچ آن‘‘ کر دیتا ہے جو بنیادی خلیوں کو نئے سفید خلئے بنانے کی تحریک دیتا ہے اور بالخصوص سارے مدافعتی نظام کی تعمیر نو کرتا ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *