دانت برش نہ کرنے پر نوجوان لڑکی موت کے منہ میں چلی گئی

Tooth Brush1

نئی دہلی -بھارت میں دانت صاف نہ کرنے کی وجہ سے ایک لڑکی موت کے منہ میں چلی گئی، جس کی کہانی سن کر آپ کبھی بھولے سے بھی دانت برش کرنے میں سستی نہیں کریں گے۔ ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق 26سالہ مالا دانتوں کی صفائی کا بالکل خیال نہیں رکھتی تھی جس کی وجہ سے اس کے کئی دانتوں کو کیڑا لگ چکا تھا اور کئی دانت کھائے جا چکے تھے۔ پھر اس کے دانتوں میں درد رہنے لگا مگر اس نے بھی کسی عام آدمی کی طرح درد ختم کرنے کی گولیوں پر اکتفا کیے رکھا، حتیٰ کہ اس کے لیے سانس لینا بھی دو بھر ہو گیا۔ ہوا یوں کہ دانتوں میں ہونے والی انفیکشن اس کے گلے تک پھیل گئی اور اس کا سانس بند ہونے لگا۔ یہ صورتحال دیکھ کر اس کی والدہ اسے نئی دہلی کے ایک قریبی ہسپتال لے گئی جہاں سے اسے فورٹیز ہسپتال ریفر کر دیا گیا۔ فورٹیز ہسپتال میں ڈاکٹروں نے اس کے ٹیسٹ کیے تو معلوم ہوا کہ اس کے دانتوں کا انفیکشن اس کے اندرونی اعضاءتک پھیل چکا تھا اور وہ لیمیئرز سینڈروم (Lemierre's Syndrome) نامی بیماری میں مبتلا ہو چکی تھی۔ ہسپتال میں پہنچ کر اس کی حالت سنبھلنے کی بجائے بگڑتی چلی گئی۔اس نے کھانا پینا اور بولنا تک چھوڑ دیا اور سانس لینا بھی لگ بھگ ناممکن ہو گیا جس پر ڈاکٹروں نے اسے آئی سی یو میں منتقل کر دیا۔ دنوں میں اس کے وزن میں 25کلوگرام تک کمی واقع ہو گئی اور وہ ہڈیوں کا ڈھانچہ بن کر رہ گئی۔ انفیکشن اس کے سینے تک پہنچنے کے باعث وہ سینے کے درد میں بھی مبتلا ہو گئی تھی اور اسے نمونیا ہو گیا تھا اور بالآخر اس نے آئی سی یو میں ہی دم توڑ دیا۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ ”مالا کے مرض کا آغاز دانتوں کو صاف نہ کرنے سے شروع ہوا، اگر وہ باقاعدگی سے دانت صاف کرتی تو اس صورتحال سے دوچار نہ ہوتی :-“

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *