تبدیلی جنس کے بعد سہیلی سے شادی رچالی

ملتان -ہائیکورٹ بنچ کے مسٹر جسٹس مظہر اقبال سدھو نے جنس تبدیل ہو کر لڑکا بننے والے سے اس کی سابق سہیلی کی شادی کے خلاف مقدمہ میں پولیس کو ریکارڈ سمیت طلب کر لیا . قبل ازیں بستی خیرشاہ گلگشت کالونی ملتان میں مقیم عائشہ سجاد نے موقف اختیار تھا کہ اس کے بچپن کی سہیلی جنس تبدیل ہونے کے بعد دو سال قبل لڑکا بن گئی تو رٹ گزار نے ایف اے تعلیم مکمل کرتے ہی مذکورہ سہیل احمد سے شادی کر لی جس کے رنج میں والدہ نجمہ سجاد نے پولیس تھانہ سٹی تونسہ شریف میں 25 جون کو غلط مقدمہ درج کرادیا جس میں اب پولیس ہراساں کر رہی ہے . عدالت میں گزشتہ روز رٹ گزار کی والدہ بھی پیش ہو گئی اور الزام عائد کیا کہ اس کی بیٹی رٹ گزار عائشہ سجاد شادی کی آڑ میں ہم جنس پرستی کی مرتکب ہو رہی ہے عدالت نے رٹ کی کارروائی مکمل کرتے ہوئے پولیس کو نوٹس جاری کر کے آئندہ 14 اگست کو طلب کر لیا ہے :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *