کئی دہائیوں سے غسل نہ کرنے والا ’دنیا کا گندہ ترین شخص’ انتقال کرگیا

ایران میں کئی دہائیوں سے نہانے سے کنارہ کشی کرنے کی وجہ سے ’دنیا کا گندہ ترین شخص‘ کہلانے والا آمو حاجی نامی بزرگ شہری انتقال کرگیا۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی ’اے ایف پی‘ نے ایران کی سرکاری خبر ایجنسی ’ارنا‘ کا حوالہ دیتے ہوئے رپورٹ میں بتایا کہ ایران کے جنوبی صوبہ فارس میں دیجگاہ گاؤں سے تعلق رکھنے والا ’دنیا کا گندہ ترین‘ شہری آمو حاجی 94 برس کی عمر میں چل بسے۔

رپورٹ کے مطابق آمو حاجی نامی بزرگ شہری نصف صدی سے زائد عرصہ نہانے سے گریز کرتا رہا اور اپنی ساری زندگی تنہا گزاری۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا کہ بیماری کے خوف سے آمو حاجی نے کئی دہائیاں نہانے سے گریز کیا مگر چند ماہ قبل ان کے پڑوسی انہیں پہلی بار نہانے کے لیے لے گئے تھے مگر انہیں بھی اس میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا۔

ایرانی میڈیا کے مطابق آمو حاجی کی زندگی پر 2013 میں ایک مختصر فلم بھی بنی تھی جس کا نام تھا ’دی اسٹرینج لائف آف آمو حاجی‘ جس کے بعد ان کو عالمی سطح پر پذیرائی حاصل ہوئی تھی۔