افتخار محمد چوہدری کو 24 ارب روپے کا قانونی نوٹس

iftikharسابق فوجی صدر پرویز مشرف کے دور میں وزیرِ قانون کے عہدے پر فائز رہنے والے ایڈوکیٹ رانا اعجاز احمد نے سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کو 24 ارب روپے کی ادائیگی کا قانونی نوٹس بھیجا ہے۔ایڈوکیٹ رانا اعجاز احمد نے اس نوٹس میں کہا ہے کہ افتخار چوہدری نے چیف جسٹس کے عہدے کے دوران آزاد عدلیہ کی آڑ میں قوم کو دھوکہ دیا اور دنیا کی نظر میں پاکستان کی اہمیت کو نقصان پہنچایا۔انہوں نے کہا کہ جسٹس افتخار چوہدری نے ایک عبوری حکم نامے یا پی سی او کے تحت دو مرتبہ حلف اٹھایا تھا اور پرویز مشرف کو اجازت دی تھی کہ وہ آئین میں ترمیم کریں۔
قانونی نوٹس میں سابق چیف جسٹس پر عہدے کے غلط استعمال کا بھی الزام عائد کیا گیا ہے۔ایڈوکیٹ رانا اعجاز احمد نے کہا ہے کہ اگر سابق چیف جسٹس کی جانب سے دو ہفتے کے اندر نقصانات کے بدلے میں رقم کی ادائیگی نہیں کی گئی تو وہ عدالت جائیں گے۔قانونی نوٹس میں یہ بھی کہا گیا کہ یہ رقم آئی ڈی پیز میں تقسیم کی جائے گی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *